بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کا سلسلہ جاری ‘ 7کشمیری شہید

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کا سلسلہ جاری ‘ 7کشمیری شہید


اسلام آباد۔ ترجمان دفتر خارجہ نفیس زکریا نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کا سلسلہ جاری ہے‘ 7کشمیری نوجوانوں کو جعلی مقابلے میں شہید کیا گیا ہے‘ حریت قیادت کو گرفتار کیا جارہا ہے اور جمعہ کی نماز پر پابندی لگائی جارہی ہے‘ بی جے پی کی جانب سے انتخابات میں پاکستان خلاف مہم افسوس ناک ہے‘ بھارت میں مسلمانوں سمیت دیگر اقلیتوں پر مظالم بھارت کے نام نہاد جمہوری چہرے پر دھبہ ہے‘ بھارت کی جانب سے دفاعی ہتھیاروں میں غیر حقیقی اضافہ اور اسلحہ کی دوڑ جنوبی ایشیاء کی سلامتی اور امن کے لئے خطرہ ہے‘ داعش اور دہشت گردوں کے ٹھکانے افغانستان میں موجود ہیں‘ بعض عناصر افغانستان کی سرزمین دہشت گردوں کی مالی معاونت کرکے پاکستان کے خلاف استعمال کررہے ہیں‘ پاکستان کے سکیورتی خدشات کی وجہ سے پاک افغان سرحد عارضی طور پر بند کی جو جلد کھول دی جائے گی۔ جمعرات کو ہفتہ وار میڈیا بریفنگ دیتے ہوئے ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں جارحیت کی مذمت کرتے ہیں ۔

پہلے ابتدائی بیان میں انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کا سلسلہ جاری ہے سات مزید کشمیری نوجوانوں کو جعلی مقابلوں میں سہید کیا گیا۔ بھارتی افواج نے آئی ای ڈیز سے مقبوضہ کشمیر میں کوئی گھروں کو تباہ کیا‘ مسجد کے امام کو بھی شہید کیا گیا اور بھارتی افواج نے کئی مساجد میں جمعہ کی آذان نہیں ہونے دی۔ پاکستان نے ایٹمی عدم پھیلاؤ کے حوالے سے سیمینار میں شرکت کی۔ مشیر خارجہ سرتاج عزیز لندن کے دورے پر ہیں تین پاکستان کے بحری جہاز اور ہیلی کاپٹر ایرانی بندرگاہ کے خیر سگالی کے دورے پر ہیں وہاں پر ان کا استقبال کیا گیا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ بی جے پی کی جانب سے انتخابات میں پاکستانی کارڈ استعمال کرنا بدقسمتی ہے۔ علاقائی خوش حالی کے لئے پرامن ہمسائیہ کے ویژن پر عمل کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں پارلیمانی اسمبلی کی کمیٹی کے اجلاس میں بھارت سمیت کئی ممالک کے پارلیمنٹرین نے شرکت کی ہے پاکستان بھارت کے ساتھ نتیجہ خیز مذاکرات کا حامی ہے اور مسئلہ کشمیر سمیت دیگر مسائل کا حل چاہتا ہے۔

پاکستان نے اس حوالے سے خیر سگالی کے حوالے سے کئی اقدامات کئے لیکن بھارت کی جانب سے کوئی جواب نہیں دیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کی مذہبی آزادی کے حوالے سے کمیشن کی رپورٹ نے بھارت میں مذہبی اقلیتوں کی حقوق کی پامالی اور مظالم پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ عالمی برادری کو اس صورتحال کا نوٹس لینا چاہئے۔ بھارتی انتہا پسند ہندوؤں کی جانب سے مسلمانوں اور دیگر اقلیتوں پر مظالم کئے جارہے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ بھارت کی جانب سے عیر حقیقی دفاعی صلاحیت میں اضافہ جنوبی ایشیاء کے امن اور سلامتی کے لئے خطرہ ہے بھارت ہتھیاروں کا سب سے بڑا امپورٹر بن گیا ہے۔ پاکستان خطے میں اسلحہ کی دوڑ کے خلاف ہے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ امریکہ نے پاکستان کو دہشت گردی کے خلاف جنگ اخراجات کے حوالے سے کولیشن سپورٹ فنڈز کے تحت تین سو پچاس ملین ڈالر جاری کئے ہیں۔ امریکی سنٹرل کمانڈ کے سربراہ نے پاکستان کو دہشت گردی کے خلاف پارٹنر تسلیم کیا ہے حقانی نیٹ ورک سمیت دہشت گردوں کے خلاف پاکستان کی جانب سے کئے گئے اقدامات کو تسلیم کیا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ بھارت کی جانب سے مذہبی اقلیتوں پر مظالم بھارت کے نام نہاد جمہوری چہرے پر دھبہ ہے۔

بھارت نے سمجھوتہ ایکسپریس سانحہ کے حوالے سے تحقیقات کے حوالے سے کوئی تفصیلات فراہم نہیں کیں بلکہ ایک طریقہ کار کے تحت اس میں ملوث مجرموں کو بری کیا جارہا ہے۔ مشیر خارجہ سرتاج عزیز کے لندن کے دورے کے دوران افغانستان کے قومی سلامتی کے مشیر سے ملاقات ہوگی اور باہمی مسائل پر بات چیت ہوگی۔ افغانستان میں دہشت گردوں کے ٹھکانے موجود ہیں بعض عناصر دہشت گردوں کی پشت پناہی اور مالی معاونت میں ملوث ہیں اور پاکستان کے خلاف استعمال کررہے ہیں پاکستان نے ان خدشات کی وجہ سے سرحد عارضی طور پر بند کی ہے جو جلد کھول دی جائے گی۔ اس حوالے سے اہم اقدامات کئے جارہے ہیں۔ داعش بھی افغانستان میں موجود ہے پاکستان افغانستان کی قیادت میں مسئلہ کے پرامن حل کا حامی ہے۔