بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبرپختونخوا حکومت کا لوڈشیڈنگ کیخلاف عدالت جانیکا اعلان

خیبرپختونخوا حکومت کا لوڈشیڈنگ کیخلاف عدالت جانیکا اعلان


پشاور۔خیبرپختونخوا حکومت نے لوڈشیڈ نگ میں اضافہ کیخلاف عدالت سے رجوع کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ صوبے کے ماس ٹزانزٹ منصوبے کا مقابلہ میٹروبس نہیں کرسکتی بلاجواز تنقید نہ کی جائے وفاقی حکومت میٹرو بس کی تمام تفصیلات عوام کے سامنے لائیں۔

وزیراعلیٰ ہاوس میں چائنہ اور خیبرپختونخوا حکومت کے درمیان 610میگاواٹ کے منصوبے کی مفاہمت کی یاداشت پردستخط کردئیے گئے ۔ میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے وزیراعلی پرویزخٹک کا کہناتھا کہ چینی کمپنی دو منصوبوں سے 610 میگاواٹ بجلی پیدا کرے گی پانی سے زیادہ سے زیادہ بجلی پیدا کرنا چاہتے ہیں ۔پاکستان میں 50 ہزار میگاواٹ بجلی پانی سے پیدا کرنے کی گنجائش ہے،صوبے میں 214 میگاواٹ بجلی کے پیداواری منصوبوں پر کام جاری ہے، اپنے وسائل سے صوبے میں 783 میگاواٹ بجلی پیدا کریں گے،4 ہزار 447 میگاواٹ بجلی پیدا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، آٹھ ہزار اسکول اور دو سو بی ایچ یوز میں بجلی میسر نہیں جن کے لئے جلد سولر سٹم متعارف کیا جائیگا۔

وزیراعلیٰ پرویزخٹک کا کہناتھا کہ بس منصوبے پر صوبائی حکومت کو بلاجواز تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے صوبے میں بین الاقوامی معیار کا بس منصوبہ شروع کررہے ہیں ، نئی بس سروس پر 56 ارب روپے سے زیادہ خرچ آئے گاجس سے تقریبا پانچ لاکھ مسافر مستفید ہوں گے، بجلی کی لوڈشیڈنگ پربرہمی کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعلی پرویزخٹک نے عدالت سے رجوع کرنے کا اعلان کیا اور کہا کہ اگر کوئی بجلی چوری کرتا ہے تو واپڈا انہیں پکڑے، وزیراعلی پرویزخٹک کا کہناتھا کہ وفاقی حکومت نے چارسالوں میں ابھی تک ایک سڑک بھی صوبے میں نہیں بنائی وزیر اعظم کو پختونخوا کی عوام نظر نہیں آتی۔