بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / مشال قتل، ایک اورویڈیو منظر عام پرآگئی

مشال قتل، ایک اورویڈیو منظر عام پرآگئی

مردان۔مردان یونیورسٹی واقعے کی ایک اور وڈیو سامنے آ گئی ۔ مشال خان قتل کے بعد طلبہ اس کی لاش ڈھونڈ تے رہے ۔انہوں نے گاڑیوں کی تلاشی لی۔مشتعل طلبہ لاش کو جلانا چاہتے تھے ۔مردان کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں مشال خان کے قتل کے بعدبنائی گئی اس ویڈیو میں بظاہرلگتاہے کہ طلبہ مشال خان کی لاش ڈھونڈنے کے لئے ہرگاڑی کی تلاشی لے رہے ہیں۔مشتعل مظاہرین اس کی لاش کو جلانا چاہتے تھے ، پولیس نے پرائیویٹ گاڑی میں لاش کو منتقل کیا اور لاش کوجلانے سے بچایا۔

اس سے پہلے سامنے آنے والی وڈیو میں ایک شخص مجمع کومشال خان کوقتل کرنے پرمبارک باد دیتے دکھایا گیا اور ان سے حلف اٹھوایاکہ کوئی مشال خان کو گولی مارنے والے کا نام نہیں لے گا،جس نے ایسا کیا وہ غدار کہلائے گا۔مشتعل ہجوم کو اکسانے اورحلف والاشخص مبینہ طور پرتحریک انصاف کا تحصیل کونسلر عارف خان نکلا۔سینٹ قائمہ کمیٹی برائے داخلہ نے مشال خان قتل کیس فوری طور پر فوجی عدالت میں بھیجنے کامطالبہ کیا اورقتل کی ویڈیو بلاک کرنے کی سفارش بھی کی جبکہ مردان پولیس سے مفرورملزمان کینام فراہم کرنیکوکہاتاکہ انہیں ایگزٹ کنٹرول لسٹ پر شامل کیا جاسکے۔