بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبر پختونخوا یونیورسٹیوں کے وی سیز کی تقرریاں روکنے کا حکم

خیبر پختونخوا یونیورسٹیوں کے وی سیز کی تقرریاں روکنے کا حکم

پشاور۔پشاورہائیکورٹ نے خیبرپختونخوا حکومت کو صوبے کی مختلف یونیورسٹیوں کے لئے وائس چانسلرز کی تقرریوں سے روکتے ہوئے جواب مانگ لیاہے عدالت عالیہ کے جسٹس روح الامین اور جسٹس یونس تہیم پرمشتمل دورکنی بنچ نے پروفیسرڈاکٹرمنصورٗ ڈاکٹرمحمدشفیق ٗ پروفیسر ڈاکٹراے زیڈہلالی سمیت گیارہ درخواست گذاروں کی رٹ کی سماعت شروع کی تو اس موقع پران کے وکلاء سید ارشدعلی اورثاقب رضا نے عدالت کو بتایاکہ صوبائی حکومت نے نومختلف سرکاری جامعات میں وائس چانسلرز کی تقرری کے لئے اشتہار دیااوردرخواستیں طلب کیں جبکہ یہ کام اکیڈمک سرچ کمیٹی کے حوالے کیاگیا جس کے سربراہ ہائیرایجوکیشن کمیشن کے سابق چیئرمین ہیں انہوں نے عدالت کو بتایاکہ اس کمیٹی نے وائس چانسلرکی پوسٹ کے لئے ایک طریقہ کار وضع کیاجس میں اکیڈمک ٗ تجربہ اوردیگر امورشامل تھے ۔

مگردلچسپ امریہ ہے کہ یہ طریقہ کار کہیں پربھی تحریری شکل میں موجود نہیں اورکمیٹی نے خود سے ہی وائس چانسلرز کی پوسٹوں پرتقرری کے لئے مختلف امورطے کئے انہوں نے دلائل دئیے کہ درخواست گذاربھی تجربے اورتعلیم کی حیثیت سے مختلف سینئرعہدوں پررہ چکے ہیں جس میں متعلقہ شعبوں کے بحیثیت چیئرمین فرائض کی انجام دہی بھی شامل ہے تاہم جب اانہوں نے وائس چانسلرکی پوسٹوں کے لئے درخواستیں دیں تو انہیں مکمل طورپر نظرانداز کیاگیا انہیں نہ تو شارٹ لسٹ کیاگیااورنہ ہی انٹرویومیں پیش ہونے کاموقع دیاگیا قانون کے تحت وائس چانسلرکی تقرری کے لئے ایک طریقہ کارمقرر ہے۔

جس کو سرے سے اپنایاہی نہیں گیا لہٰذاتمام ممکنہ تقرریوں کو کالعدم قرار دیا جائے اوردرخواست گذاروں کو بھی انٹرویو میں شامل ہونے کاموقع فراہم کیاجائے کیونکہ وہ وائس چانسلرکے عہدوں کے لئے اہل امیدوارہیں فاضل بنچ نے ابتدائی دلائل کے بعد حکومت کو وائس چانسلرزکی تقرری سے روکتے ہوئے ہائیرایجوکیشن کمیشن ٗصوبائی اوراکیڈمک سرچ کمیٹی کو نوٹس جاری کرکے جواب مانگ لیا۔