بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبر پختونخوا اسمبلی ٗ پی ٹی آئی اور ن لیگ میں کشیدگی جاری

خیبر پختونخوا اسمبلی ٗ پی ٹی آئی اور ن لیگ میں کشیدگی جاری


پشاور۔پانامہ کیس فیصلے کے بعد سے پی ٹی آئی اور ن لیگ میں پید اہونے والی کشیدگی کم نہ ہوسکی اور گذشتہ روز بھی خیبر پختونخوااسمبلی مخالفانہ نعروں سے گونج اٹھی مسلم لیگ ن اوراوپوزیشن کے بعد دیگر ممبران کی طرف سے عمران خان کے خلاف نعرہ بازی کا ایوان میں موجود پی ٹی آئی کے واحد رکن حاجی فضل الٰہی نے بھرپور جواب دیا صوبائی اسمبلی کا اجلاس مہرتاج روغانی کی صدارت میں شروع ہوا تو ابتداء سے ہی ماحول کشیدہ رہا تلاوت کے فوراً بعد پی ٹی آئی کی رکن نرگس علی نے کورم کی نشاندہی کی تو اپوزیشن اراکین اپنی نشستوں سے اٹھ کھڑے ہوئے اور زبردست نعرہ بازی کی اپوزیشن کاکہناتھاکہ اجلاس حکومت نے بلایاہے لہٰذا کورم پوراکرنے کی ذمہ دار ی بھی اسی کی ہے اس موقع پر دومنٹ کے لیے گھنٹیاں بجائیں گئیں ۔

جس کے بعدکور م پوراہوا تو کاروائی شروع کی گئی ،وقفہ سوالات کے دوران بھی اپوزیشن نے حکومتی اراکین کی برائے نام حاضری کافائدہ اٹھاتے ہوئے حکومت کو ٹف ٹائم دیئے رکھا اس دوران قومی وطن پارٹی کی معراج ہمایوں نے وقفہ سوالات کے دوران ہی ایک مرتبہ پھر کورم کی نشاندہی کردی جیسے ہی سپیکر نے گنتی کے لیے کہاتو اپوزیشن ارکان نے گو عمران گو ا ور رو عمران رو کے نعرے لگانا شروع کردئیے اس موقع پر کان پڑی آواز سنائی نہیں دے رہی تھی ایوان میں جماعت اسلامی کے ارکا ن خاموش رہے ۔

جبکہ پی ٹی آئی کے صرف حاجی فضل الٰہی موجودتھے جنہوں نے وزیر اعظم نوازشریف کے خلاف نعرہ بازی شروع کردی فضل الٰہی کا کہناتھاکہ نوازشریف کی دشمن ملک میں فیکٹریاں ہیں اور وہ بھارتیوں کے کاروباری پارٹنر ہیں انہوں نے گو پانامہ گو،گو نواز گو کے نعرے بھی لگائے اسی ہنگامہ آرائی کے دوران سپیکر نے اجلاس منگل تین بجے تک کے لیے ملتوی کردیا اجلاس ملتوی ہونے کے بعد بھی ایوان نعروں سے گونجتا رہا