بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / لاپتہ خاتون 60سال بعد گھر پہنچ گئی

لاپتہ خاتون 60سال بعد گھر پہنچ گئی

دیر بالا۔دیر بالا عشیرئی درہ سے لاپتہ عورت ساٹھ سال بعد مقبوضہ کشمیر سے واہگہ بارڈر کے ذریعے پاکستان پہنچ گئی بھائیوں کے ساتھ ساٹھ سال بعد ملاقات میں فرط جذبات سے روپڑی بھائیوں کے ساتھ ملاقات سوشل میڈیا کے ذریعے ممکن ہو سکی۔تفصیلات کے مطابق گورکوہی عشیرئی درہ سے تعلق رکھنی والی خاتون مسماۃ جہان سلطانہ ساٹھ سال قبل لاپتہ ہوئی تھی اور اس کاکچھ پتہ نہ تھا لیکن اسکے بیٹے ضیاء الحق نے سوشل میڈیا کے ذریعے ایک پیغام دیا تھا کہ وہ مقبوضہ کشمیر کے علاقے اننت ناگ میں رہائش پذیر ہیں اور ان کی والدہ کا تعلق دیر بالا سے ہے اسکی شدید خواہش ہے کہ وہ اپنے بھائیوں اور اپنے خاندان سے ملے جس پر دیر لوئیر کے ایک نوجوان کے کوششوں سے اسکے بھائیوں کا پتہ چل گیا۔

مسماۃ جہان سلطانہ کے بارے میں معلوم ہوا ہے کہ وہ گورکوہی عشیرئی درہ سے تعلق رکھتی ہے اور سکے والدین سردیوں میں چارسدہ میں رہائیش پدیر ہوتے تھے اسکی شادی والد اور بھائیوں نے محمد سید نامی شخص سے کی تھی جو اب بھی زندہ ہے مسماۃ جہان سلطانہ گزشتہ روز اپنے ایک بیٹے ضیاء الحق،بیٹی ریحانہ اختر اور اپنے ایک نواسے حارث کے ساتھ واہگہ بارڈر کے زریعے پاکستان پہنچی جہاں پر انکے بھائی انعام الدین عرف ظلامئی،جمال الدین اور صفاع الدین اور تیمرگرہ سے تعلق رکھنے والے اکرام ہمدردانکے استقبال کے لئے پہلے سے موجود تھے ۔ 60سال بعد اپنے بھائیوں کے ساتھ ملاقات میں فرط جزبات سے روپڑی مسماۃ جہان سلطانہ اپنے بھائیوں بیٹے ور بیٹی کے ساتھ آج اپنے آبائی علاقے گورکوہی عشیرئی درہ پہنچیں گی۔