بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / حیات آباد کو جدید سمارٹ سٹی بنانے کا فیصلہ

حیات آباد کو جدید سمارٹ سٹی بنانے کا فیصلہ

پشاور ۔ صوبائی حکومت نے حیات آباد کو جدید سمارٹ سٹی بنانے کی تجویز کو عملی جامہ پہنانے کیلئے پی ڈی اے حکام کو چینی کمپنی کے ساتھ مل کر منصوبے پر کا م کرنے کی ہدایت کر دی ہے منصوبے کے تحت چین کے مدد سے حیات آباد کو ایک جدیداور خوبصورت شہر میں تبدیل کیا جائے گا جبکہ جنرل بس سٹینڈ چمکنی کے لئے چمکنی میں 800کنال اراضی صوبائی حکومت نے خرید لی ہے موجودہ جنرل بس سٹینڈ کی جگہ سی پیک ٹاور اور شاپنگ پلازہ بنایا جائے گا ۔

ان خیالات کا اظہار سینئر وزیر بلدیات و دیہی ترقی خیبرپختونخوا و پارلیمانی لیڈر جماعت اسلامی عنایت اللہ خان سے یو ینگ کے قیادت میں چین کے وفد نے ملاقات کے دوران کیا اس موقع پر ڈائیر یکٹر پی ڈی اے امین الدین خان بھی موجود تھے ۔ چینی وفد نے پشاور سے باہر جنر ل بس اسٹینڈ کی تعمیر ، سی پیک ٹاور ، شاپنگ پلازہ کی تعمیر اور دیگر منصوبوں پر تبادلہ خیال کیا ۔ اس موقع پر سینئر وزیر عنایت اللہ خان نے وفد سے بات چیت کر تے ہوئے کہا کہ صوبائی حکومت چین کے ساتھ تمام منصوبوں پر تیزی کے ساتھ کا م کرنے کی خواہاں ہے ۔تمام منصوبوں کو جلد از جلد مکمل کر کے صوبے کو ترقی کے راہ پر گامزن کرنا چاہتے ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ ہماری کوششوں اور چینی کمپنیوں کی سرمایہ کاری سے صوبے میں معاشی سرگرمیاں تیز ہورہی ہیں ۔ہم رہائشگا ہیں ، دُوکانیں، دفاتر ، فلیٹس اور انڈسٹریز بنائیں گے۔ ان چیلنجز سے نمٹنے کے لیے ٹھوس منصوبہ بندی کی ضرورت ہے ۔چین کے اشتراک سے صوبے میں چھوٹی بڑی صنعتیں لگائیں گے جس سے صوبے میں بے روزگاری کا خاتمہ ہوگا اور خوشحالی آئے گی ۔انہوں نے کہا کہ لوکل گورنمنٹ ڈیپارٹمنٹ کی طر ف سے خیبرپختونخوا میں چینی گورنمنٹ سے معاہدہ کیا گیا ہے اور اس کے نتیجے میں ہم پشاور کے پرانے جنرل بس سٹینڈ کی جگہ پر سی پیک ٹاور اور شاپنگ پلازہ بنارہے ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ جنرل بس سٹینڈ چمکنی کو تک پہنچائیں گے جس کے لیے چمکنی میں 800کنال زمین صوبائی حکومت نے خرید لی ہے ۔ رینگ روڈ سے ورسک روڈ تک اور کارخانوں تک بارہ ارب روپے پراجیکٹ ہے جس پر چینی کمپنیوں کے ساتھ ملکر کام کررہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ رنگ روڈ میسنگ لنکس پر چین کے تعاون سے کام کر رہے ہیں ۔ سینئر وزیر عنایت اللہ خان نے چینی وفد کو حیات آباد کو جدید سمارٹ سٹی بنانے کے لیے مشترکہ طور پر کام کرنے کی تجویز پیش کی اور پی ڈی اے حکام کو ہدایت کی کہ چینی کمپنی کے ساتھ مل کر منصوبے پر کا م کریں ۔ چین کے مدد سے حیات آباد کو ایک جدیداور خوبصورت شہر میں تبدیل کریں گے ۔