بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ملازمین کیلئے ہاؤس رینٹ نئے بنیادی پے سکیل پر

ملازمین کیلئے ہاؤس رینٹ نئے بنیادی پے سکیل پر

پشاور۔آئندہ نئے مالی سال کے بجٹ میں سرکاری ملازمین کو ہاؤس رینٹ 2008کے بنیادی پے سکیلز کے 45فیصد کے بجائے 2015کے بنیادی پے سکیلوں کے 45فیصد کی بنیاد پر اداکرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔آئندہ نئے مالی سال کے وفاقی بجٹ میں پشاور سمیت ملک کے آٹھ بڑے شہروں میں مقیم وفاقی محکموں کے ملازمین کو ہاؤس رینٹ کی ادائیگی ہو گی ۔

ذرائع کے مطابق گریڈ ایک کے ملازم کو ہاؤس رینٹ 5670سے 45فیصد اضافہ کے ساتھ 12060، گریڈ دو کے ملازمین کو 6035روپے ماہانہ کے بجائے 45فیصد اضافہ سے 12935روپے ماہانہ ، گریڈ تین کے ملازمین کو 4740سے 14335روپے ، گریڈ چار 7440روپے کے بجائے 15730گریڈ پانچ کو 8140کے بجائے 17185، گریڈ چھ کو 8680روپے کے بجائے 18485روپے ، گریڈ سات کے ملازمین کو 9230روپے کے بجائے 19940، گریڈ آٹھ کے ملازمین کو 9965کے بجائے 21400، گریڈ نو کے ملازمین کو 10720کے بجائے 22865، گریڈ دس کے ملازمین کو 11755کے بجائے 24595، گریڈ گیارہ کے ملازمین کو 12365کے بجائے 26390، گریڈ بارہ کے ملازمین کو 13655روپے ماہانہ کے بجائے 28555، گریڈ 13کے ملازمین کو 14845کے بجائے 31150، گریڈ چودہ کے ملازمین کو 16320کے بجائے 34040، گریڈ پندرہ کے ملازمین کو 17820کے بجائے 38135، گریڈ سولہ کے ملازمین کو 20160روپے ماہانہ کے بجائے 43960، گریڈ سترہ کے ملازمین کو 24650روپے کے بجائے 51780، گریڈ اٹھارہ کو 31510روپے ماہانہ کے بجائے 64940روپے ، گریڈ انیس کے ملازمین کو 39080روپے ماہانہ کے بجائے 81655، گریڈبیس کے ملازمین کو 44485ماہانے کے بجائے 89405، گریڈ اکیس کے ملازمین کو 49680روپے کے بجائے 99135روپے ، جبکہ گریڈ بائیس کے ملازمین کو 2008کے بنیادی سکیلوں 455470روپے ماہانہ کے 45فیصد کے بجائے 2015کے بنیادی پے سکیلوں 111195کے 45فیصد کے مطابق ہاؤس رینٹ ادا کیا جائے گا۔