بریکنگ نیوز
Home / صحت / جگرکے لیے بہترین اور بدترین غذائیں

جگرکے لیے بہترین اور بدترین غذائیں

واشنگٹن۔ جگر انسانی جسم کا حساس اور بہت اہم عضو ہے۔ اسے جسم کی سب سے زیادہ پیچیدہ فیکٹری بھی کہا جاتا ہے جہاں 50 ہزار سے زائد کیمیائی تعاملات ہوتے رہتے ہیں۔ لیکن جگر اس تمام کارکردگی کے باوجود بہت حساس عضو ہے اور اس سے وابستہ امراض بھی گنتی سے باہر ہیں۔تاہم اپنا طرزِ زندگی بدل کر اپنے جگر کو بہترین حالت میں رکھ سکتے ہیں لیکن ساتھ جگر کو بھی خراب کرنے والے کھانوں اور غذاؤں سے اجتناب بھی ضروری ہے۔ طبی ماہرین نے جگر کی دشمن اور دوست غذاؤں کی یہ فہرست بنائی ہے۔ پہلے جگر دوست غذاؤں کا ذکر ہوجائے۔

1:  دلیہ

دلیے میں ریشے (فائبر) کی بڑی مقدار موجود ہوتی ہے۔ اس لیے ضروری ہے کہ دن کا آغاز دلیے سے کیا جائے۔ ایک جانب تو یہ موٹاپے کو دور کرتا ہے اور دوسری جانب فائبر جگر کو تندرست رکھتا ہے۔

2: شاخ گوبھی اور دیگر سبزیاں

شاخ گوبھی (بروکولی) اور دیگر سبزیاں جگر کے لیے بہترین کردار ادا کرتی ہیں۔ ایک جانب تو یہ جگر پر اضافی چربی جمع ہونے سے روکتی ہیں تو جگر کی حفاظت بھی کرتی ہے ۔ اس کے لیے ضروری ہے کہ بھاپ میں پکائی ہوئی شاخ گوبھی بادام کے ساتھ کھائیں تو یہ جگر کے لیے بہت مفید ہوگی۔ شاخ گوبھی میں موجود کئی اجزا جگر کو طاقت فراہم کرتے ہیں۔

3: کافی

کافی پینے والے افراد کے لیے اچھی خبر ہے کہ دو تین کپ روزانہ کافی کا استعمال مرغن غذاؤں سے جگر کے پہنچنے والے نقصان کا ازالہ کرتا ہے۔ ایک تحقیق سے انکشاف ہوا ہے کہ کافی جگر کے سرطان کو دور کرنے میں مدد دیتی ہے۔

4: سبز چائے

سبز چائے اپنے اندر جادوئی تاثیر رکھتی ہے۔ اس میں ایک قسم کا اینٹی آکسیڈنٹ کیٹاچن پایا جاتا ہے۔ سبز چائے جگر کے سرطان اور اس کی دیگر اقسام کو لاحق ہونے سے روکتی ہے۔ واضح رہے کہ گرم سبز چائے تاثیر میں بہتر ہوتی ہے۔

5: پانی کا استعمال

پانی جگر کے لیے مفید ہے جبکہ یہ وزن کو قابو میں رکھتا ہے۔ ضروری ہے کہ پورا دن پانی کی ضروری مقدار پی جائے اور میٹھے مشروبات اور سافٹ ڈرنکس سے اجتناب کیجئے۔

6: بادام

باداموں میں وٹامن ای کی بڑی مقدار موجود ہوتی ہے جو انسانی جلد اور جگر کے لیے بہت مفید ہوتی ہے۔ یہ جگر کی چربی کو دور کرتی ہے اور فیٹی لیور مرض کو دور کرتی ہے۔ اس کے علاوہ بادام دل کو مقوی بناتا ہے۔

7: پالک

سبزپتوں والی سبزیوں کا استعمال نہ چھوڑیئے بلکہ اگر ممکن ہو تو پالک کھانے کا عمل جاری رکھیے۔ پالک میں طاقتور اینٹی آکسیڈنٹس گلوٹا تھائن موجود ہوتا ہے جو جگر کو طاقتور بناتا ہے۔

جگر کے لیے مضر غذائیں

1: فاسٹ فوڈ اور چکنائی والے کھانے

فرنچ فرائز، برگرز اور روغنی کھانے جگر کو متاثر کرسکتے ہیں۔ ان کا بے تحاشا استعمال جگر پر سوزش کی وجہ بنتا ہے۔ اگلی مرتبہ ان غذاؤں کو منہ بھر کر اور پیٹ بھر کر کھانے سے اجتناب کیجئے۔

2: چینی سے دور رہیں

چینی اور میٹھی اشیا سے اجتناب جگر کے لیے ضروری ہے۔ جگر زائد چینی کو چربی میں بدل دیتا ہے جو خود جگر پر اور دیگر حصوں میں جمع ہونا شروع ہوجاتی ہے۔ اسی لیے مٹھاس سے دور رہیں۔

3: نمک کم کم

ہمارے جسم کو تھوڑے بہت نمک کی ضرورت ہوتی ہے۔ بعض سروے سے معلوم ہوا ہے کہ نمک کی زیادتی جگر کو متاثر کرتی ہے۔ بہتر یہی ہے کہ آپ نمک اور اس سے بنی اشیا سے اجتناب کیجئے۔