بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / او آئی سی کا اقوام متحدہ سے مقبوضہ کشمیر میں فیکٹ فائنڈنگ مشن بھیجنے کا مطالبہ

او آئی سی کا اقوام متحدہ سے مقبوضہ کشمیر میں فیکٹ فائنڈنگ مشن بھیجنے کا مطالبہ


انقرہ۔او آئی سی نے کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی حمایت کر دی ، مقبوضہ کشمیر میں اقوام متحدہ کا فیکٹ فائنڈنگ مشن بھیجنے کا مطالبہ کر دیا۔انقرہ میں مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے متعلق او آئی سی کا پارلیمانی فورم ہوا جس میں مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے مظالم کی مذمت کی گئی۔او آئی سی پارلیمانی فورم کا کہنا ہے کہ جموں و کشمیر کا مسئلہ پاکستان اور بھارت کے درمیان بنیادی تنازع ہے ،کشمیریوں کو سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق مستقبل کے فیصلے کا حق اور مقبوضہ وادی میں اقوام متحدہ کا فیکٹ فائنڈنگ مشن بھیجا جائے۔

اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق نے او آئی سی فورم میں پاکستان کی نمائندگی کی اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم پر اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے معاملے کو اجاگر کیا۔ ایاز صادق نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر سے توجہ ہٹانے کیلیے پورے خطے کی سلامتی خطرے میں ڈال رہا ہے۔ایاز صادق نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں نہتے کشمیریوں پر پیلٹ گن استعمال کی جا رہی ہے،بھارت لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کر رہا ہے، پاکستانی عوام ہر قیمت پر ملکی خود مختاری اور علاقائی کی حفاظت کیلیے تیار ہیں۔ادھر دفتر خارجہ کے مطابق انقرہ میں ہونیو الے او آئی سی پارلیمانی فورم کے اعلامیے میں رکن ملکوں نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ظلم وستم کی شدید مذمت کرتے ہوئے کشمیریوں کے حق خود ارادیت کا اعادہ کیا ہے۔

دفتر خارجہ کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم سے متعلق دستاویزی فلم دکھائی گئی، جس میں بھارتی گولیوں کا نشانہ بننے والی خواتین اور بچوں سمیت اجتماعی قبروں کی دریافت کو بھی دکھایا گیا۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق اجلاس کے بعد جاری ہونے اعلامیہ میں کشمیریوں کے حق خود ارادیت کا اعادہ کیا گیا اور مقبوضہ کشمیر میں اقوام متحدہ کا فیکٹ فائنڈنگ مشن بھیجنے پر بھی زور دیا گیا۔اعلامیہ میں کہا گیا ہے کشمیریوں کوسلامتی کونسل کی قرار داد کے مطابق مستقبل کے انتخاب کا حق دیا جائے۔