بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / مانچسٹردھماکہ،خودکش حملہ آور کا والد اور بھائی گرفتار

مانچسٹردھماکہ،خودکش حملہ آور کا والد اور بھائی گرفتار


تریپولی۔مانچسٹر ایرینا میں خودکش دھماکا کرنے والے سلمان عبیدی کے والد اور بھائی کو لیبیا پولیس نے گرفتار کرلیا ۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق پولیس کا کہنا ہے کہ چھوٹے بھائی ہاشم عابدی کو اپنے بھائی کے منصوبے کا علم تھا۔ دونوں بھائی داعش کے رکن ہیں۔ مانچسٹر سے ایک مشتبہ خاتون کو بھی حراست میں لے لیا گیا ہے۔لیبیا پولیس نے مانچسٹر میں کانسرٹ کے دوران خودکش حملہ کرنے والے سلمان عابدی کے والد رمضان عابدی اور چھوٹیبھائی ہاشم عابدی گرفتار کرلیا۔

لیبیا حکام کا دعوی ہے کہ ہاشم عابدی کو اپنے بھائی کے منصوبے کا علم تھا اور دونوں بھائی داعش کے رکن ہیں۔ ہاشم کے ایک بھائی نے بتایا کہ مانچسٹر میں ہونے والے دھماکے سے چار دن قبل ہی سلمان لیبیا سے مانچسٹر گیا تھا، ان کے والد چاہتے تھے سلمان لیبیا میں ہی رہے لیکن اس نے مانچسٹر جانے پر اصرار کیا۔مانچسٹرواقعے کے بعد پولیس نے بائیس سالہ سلمان عابدی کو خود کش حملہ آور قرار دیا تھا۔ دوسری جانب مانچسٹرحملے میں ملوث ہونے کے شبے میں مانچسٹر کی رہائشی عمارت میں چھاپہ مار کر ایک مشتبہ خاتون کو بھی گرفتار کرلیا گیا ہے۔

دوسری جانبمانچسٹر دھماکے کے ملزم سلمان عبیدی کے والد نے کہا ہے کہ سلمان نے انہیں مانچسٹر جا نے کے بارے میں نہیں بتایا ۔اس کا داعش سے کوئی تعلق نہیں اورنہ ہی وہ کبھی شام گیا۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق لیبیائی حکام کا کہناتھا کہ مانچسٹردھماکے سے قبل سلمان عبیدی نے اپنی والدہ صائمہ طبل سے فون پر بات کی تھی ۔ سلمان عبیدی کی والدہ لیبیا میں ایٹمی سائنسدان ہیں ۔سیکورٹی ذرائع کے مطابق سلمان عبیدی نے اپنے بھائی کو فون کرکے کہا کہ وہ والدہ سے کہا کہ اسے فون کرلیں جبکہ مانچسٹردھماکے سے قبل سلمان عبیدی نیاپنی والدہ صائمہ طبل سے طرابلس فون کرکیبات بھی کی۔ذرائع کے مطابق 50 سالہ صائمہ طبل طرابلس یونیورسٹی سیایٹمی سائنسدان ہیں ،انہوں نے اپنی کلاس میں اول پوزیشن حاصل کی تھی ۔