بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / صوبے کی 350عبادت گاہیں انتہائی حساس قرار

صوبے کی 350عبادت گاہیں انتہائی حساس قرار

پشاور۔رمضان المبارک کی آمد کے باعث صوبے کے تین سو پچاس عبادت گاہوں کو حساس ترین قرار دیدیا ہے حساس اور حساس ترین عباد ت گاہوں پر پولیس اورایف سی تعیناتی کی جائیگی رمضان المبارک کے آمد کے باعث قانون نافذ کرنے والے اداروں کی سفارشات کی روشنی میں 250عبادت گاہوں کو حساس اورسو عبادت گاہوں کو حساس ترین قراردیاگیاہے پشاور، کوہاٹ ،ہنگو، ڈیرہ اسماعیل خان ، ٹانک ، بنوں ، پارا چنار ، نوشہرہ ، قرم ایجنسی ، سمیت صوبے کے دیگر اضلاع میں عبادت گاہوں کو حساس اور حساس ترین قراردیا گیا ہے حساس اور حساس ترین عبادت گاہوں پر سکیورٹی ہائی الرٹ رکھی جائیگی تاکہ کسی قسم کاکوئی نا خوشگوار واقعہ رونماء نہ ہو سکے حساس اور حساس ترین عبادت گاہوں کی فہرستیں متعلقہ اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز ، پولٹیکل ایجنٹس کو ارسال کردی گئی ہے ذرئع نے بتایا ہے کہ رمضان المبارک کے ابتدائی دو عشروں میں سکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کئے جائینگے تاکہ کسی قسم کا کوئی ناخوشگوار واقعہ رونماء نہ ہوسکے سکیورٹی کے خدشات کے پیش نظرحساس اور حساس ترین عبادت گاہوں پرتمام حکومتی اداروں کو الرٹ رکھا جائے گا ۔