بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / وزیراعظم کمزور وکٹ پر کھیل رہے ہیں ٗ اسفندیار ولی

وزیراعظم کمزور وکٹ پر کھیل رہے ہیں ٗ اسفندیار ولی

پشاور۔صوبہ کی اہم سیاسی قیادت نے فاٹا کے فوری انضما م کو وقت کاتقاضا قراردیتے ہوئے واضح کیاہے کہ انضمام میں مزید تاخیر سے فاٹا میں مایوسی کی لہر پھیلے گی اگر تاخیر ی حربے جاری رکھے گئے تو خیبر پختونخوا اورفاٹا کے لوگ جلد اسلام آبادکارخ کرینگے جبکہ وفاقی حکومت نے اصلاحات کوعملی جامہ پہنانے کے عزم کا اظہارکیاہے اس سلسلے میں روزنامہ آج کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے عوامی نیشنل پارٹی کے سربراہ اسفندیارولی خان نے کہاکہ وفا قی حکومت جان بوجھ کر اس معاملہ میں تاخیر کررہی ہے فاٹا انضمام کو معرض التوا ء میں ڈالنابدترین ناانصافی ہے وزیر اعظم نوازشریف جو ان دنوں کمزور وکٹ پرکھیل رہے ہیں اپنے دو اتحادیوں کی خاطر اصلاحات کابوریا بسترہی لپیٹنے پر تلے نظر آتے ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ بجٹ میں فاٹاکے لیے کشمیر اورگلگت بلتستان سے بھی کم رقم رکھی گئی ہے حالانکہ اس جنگ زدہ علاقہ کے لیے بہت زیادہ توجہ ومراعات کی ضرورت ہے حکومت نے پہلے فاٹا اصلاحات و انضمام کو مؤخر کرکے اوربعد ازاں بجٹ میں اس کو نظراندازکرکے قبائلی عوام کے ساتھ زیادتی کی ہے جس پر عوامی نیشنل پارٹی ہرگز خاموش نہیں رہے گی ،قومی وطن پارٹی کے مرکزی چیئر مین آفتا ب شیرپاؤ نے کہاکہ ایک سازش کے تحت فافااصلاحات و انضمام میں تاخیر کی جارہی ہے اس وقت وزیر اعظم خاصے کمزور دکھائی دے رہے ہیں اس لیے لگتاہے کہ وہ اپنے اتحادیوں کو ناراض نہیں کرنا چاہتے ،چنانچہ انکی آڑ میں وہ آج فاٹا اصلاحات کے وعدے سے پیچھے ہٹتے نظر آتے ہیں مگر ہم انکو ایسا کرنے نہیں دینگے۔

قومی وطن پارٹی اس سلسلے میں اپنے اصولی مؤقف پرڈٹی رہے گی کہ فاٹا کو فوری طورپر خیبر پختونخوامیں ضم کردیاجائے اس سلسلے میں مزید تاخیر برداشت نہیں کیجائیگی،جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ جب تمام سیاسی جماعتوں نے پارلیمنٹ میں بھی مطالبہ کیا ہے کہ ان علاقوں کا پاکستان کے ساتھ انضمام چاہتے ہیں تو یہ راستہ بہتر ہے میں سمجھتا ہوں کہ آزادی اور حقوق مانگنے والے نوجوانوں کو اب ہ دوبارہ خاموش نہیں کیا جا سکتا ۔

فاٹا کا نوجوان پولیٹیکل ایجنٹ سے آزادی چاہتا ہے لگتا ہے حکومت ڈبل مائنڈڈ ہے مگر اب یہ نہیں چلے گا حالات نے ایک موقع دیا ہے اسے فائدہ دینا چاہئے ہم، دو نمبر شہری بننے کیلئے اب قبائلی تیار نہیں ہیں ، تحریک انصاف کے رہنما اورصوبائی حکومت کے ترجمان شاہ فرمان نے کہاکہ ہم وفاقی حکومت تاخیر حربے استعمال کرکے قبائلی عوام کے زخموں پر مرہم چھڑک رہی ہے انہوں نے کہاکہ وفاقی حکومت فاٹا اصلاحا ت اور انضمام کے معاملہ میں ہرگز سنجیدہ نہیں اور وہ وقت ضائع کررہی ہے اس سلسلے میں ہمارا تمام سیاسی جماعتوں اورفاٹا کے ایم این ایز کے ساتھ رابطہ ہے اور جو بھی قدم اٹھایاجائے گا اس میں ان سب کی مشاورت شامل ہوگی ۔

ادھر مسلم لیگ ن کے صوبائی صدر اوروزیر اعظم کے مشیر امیرمقام نے کہاکہ ہماری حکومت فاٹا اصلاحات کو عملی شکل دینے کے معاملہ میں پوری طرح سے سنجیدہ ہے تاخیر کی اپنی وجوہ ہیں مگر انضمام ضرورہوگا انہوں نے کہاکہ فاٹااصلاحات و انضمام کے معاملہ میں سیاسی جماعتوں کاتقسیم ہونا افسوسنا ک امر ہے او ر ہم تمام جماعتوں کو اس سلسلے میں قائل کرنے کی کوشش کررہے ہیں ن لیگ کی حکومت ہی ان اصلاحات کو عملی جامہ پہنانے کا اعزازحاصل کرے گی ۔