بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / صوبائی حکومت کا فاٹا فنڈز بارے نئی تجویزکا عندیہ

صوبائی حکومت کا فاٹا فنڈز بارے نئی تجویزکا عندیہ

پشاور ۔خیبر پختونخوا حکومت کی طرف سے فاٹا کے لیے این ایف سی سے تین فیصد حصہ مختص کرنے کے لیے جداگانہ فارمولہ پر مرکز نے خاموشی اختیارکرلی ہے جس کے بعد صوبائی حکومت نے عیدکے بعددوبارہ وفاقی حکومت کو اپنی تجویز بھجوانے کاعندیہ دیاہے صوبائی حکومت کے فارمولے کے تحت قومی وسائل سے یکشمت تین فیصد کاٹنے کے بجائے مرکز اورچاروں صوبوں میں وسائل کی تقسیم کے بعد ہر ایک کے حصہ سے تین فیصد کے حساب سے کٹوتی کی جائے۔

اس ضمن میں صوبائی حکومت نے اپنی تجویز سے مرکز کو پہلے ہی آگاہ کررکھاہے ذرائع کے مطابق صوبائی حکومت کی تجویز کی منظوری کی صورت میں مرکزکے حصے میں سے 51ارب روپے کٹوتی ہوگی جبکہ چاروں صوبوں سے کاٹی جانے والی رقم مجموعی طور پر 69ارب روپے ہوگی یہ 110ارب روپے اگلے دس سال تک فاٹا کو فراہم کیے جاتے رہیں گے ذرائع کے مطابق صوبائی حکومت کے فارمولے کے مطابق پنجاب کے حصہ میں سے 35.7ارب روپے ،سند ھ سے 16.9ارب روپے ،خیبر پختونخوا سے 10.1ارب جبکہ بلوچستان سے مجموعی طورپر 6.3ارب روپے کٹوتی ہوگی و خیبرپختونخوا کے فارمولے پرتاحال مرکز کی طرف کوئی رد عمل نہیں آسکاہے جس کے بعدصوبائی حکومت باضابطہ طور پر اپنی تجویز مرکزکو پھربھجوانے کی تیاریاں کررہی ہے ۔