بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / ایرانی پارلیمنٹ پر فائرنگ اور امام خمینی کے مزار پر خودکش دھماکہ

ایرانی پارلیمنٹ پر فائرنگ اور امام خمینی کے مزار پر خودکش دھماکہ


تہران: ایرانی پارلیمنٹ پر فائرنگ اور امام خمینی کے مزار پر خودکش حملے میں ایک شخص ہلاک اور متعدد افراد زخمی ہوگئے۔

دارالحکومت تہران میں تین مسلح افراد نے پارلیمنٹ میں گھس کر فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں گارڈ سمیت 3 افراد زخمی ہوگئے، جب کہ امام خمینی کے مزار پر ایک حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑا دیا جس سے ایک شخص ہلاک اور متعدد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔

ایرانی رکن اسمبلی نے سرکاری میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ تہران میں تین مسلح افراد نے اسمبلی کی حفاظت پر تعینات گارڈ کو زخمی کرنے کے بعد عمارت میں گھس کر فائرنگ کردی۔ حملہ آوروں نے پارلیمنٹ میں لوگوں کے یرغمال بنانے کی کوشش کی تاہم جوابی کارروائی کے بعد حملہ آور فرار ہوگئے۔ گارڈ کو ٹانگوں پر گولی لگی ہے جب کہ دیگر دو افراد بھی زخمی ہیں۔ واقعے کی ذمہ داری کسی گروپ نے قبول نہیں کی جب کہ حملہ آوروں کی شناخت اور مقاصد واضح نہیں ہوئے ہیں۔

ادھر اسمبلی سے چند کلومیٹر کے فاصلے پر واقع امام خمینی کے مزار پر بھی خودکش حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑادیا، جب کہ بعض اطلاعات کے مطابق ایک شخص نے مزار میں فائرنگ کی۔ ایرانی میڈیا کے مطابق اس واقعے میں ایک شخص ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے۔ پولیس نے مزار سے دو مشتبہ افراد کو گرفتار بھی کیا ہے۔