بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبرپختونخوا کا سالانہ ترقیاتی پروگرام ایک نظر

خیبرپختونخوا کا سالانہ ترقیاتی پروگرام ایک نظر

پشاور۔خیبر پختونخوا کے آئندہ مالی سال کے سالانہ ترقیاتی پروگرام کے تحت مختلف اضلاع میں 600کلو میٹر پختہ سڑکیں اور20آر سی سی اور سٹیل پلوں کی تعمیر و تنصیب مکمل کی جائے گی آئندہ مالی سال میں اس شعبے کے349 منصوبوں کیلئے13ارب73 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں ان میں305 جاری منصوبوں کیلئے 12ارب94کروڑ روپے جبکہ44نئے منصوبوں کیلئے 79کروڑ روپے رکھے گئے ہیں ان منصوبوں میں چمکنی سے بڈھ بیر تک براستہ سوڑیزئی 16کلو میٹر روڈ کی تعمیر مکمل کی جائے گی ۔

صوابی میں12کلو میٹر بائی پاس روڈ کی تعمیر جبکہ سوات میں کانجو فلائی اوور پل کی جائزہ رپورٹ بھی تیار کی جائے گی۔ سوات ایکسپریس وے فیز ون میں چکدرہ تک اورفیز ٹو میں چکدرہ سے مینگورہ تعمیر کی جائے گی پشاور میں پیرزکوڑی فلائی اوورٹو ٗسوات اور مردان میں بھی اوور ہیڈ بریجز کی تعمیر کی جائے گی صوبہ بھر میں7 میٹریل ٹیسٹنگ لیبارٹریاں قائم کی جائیں گی پشاور میں آرٹ اکیڈمی جبکہ ڈویژنل لیول پر کلچرل کمپلیکس کا قیام عمل میں لایا جائیگا‘ قیوم سٹیڈیم پشاور میں فٹ بال گراؤنڈ کو عالمی معیار کے مطابق تیار کیا جائیگا پشاور میں ورسک روڈ پر دو مختلف مقامات پر بالترتیب13کنال اور5کنال پر اپارٹمنٹس اور شاپنگ مال کے لئے منصوبہ بندی و جائزہ رپورٹ کے ساتھ ساتھ خاکہ بھی تیار کیا جائے گا ۔

نشتر آباد پشاور میں سرکاری فلیٹس تعمیر کئے جائینگے ماڈل ٹاؤن پشاور اور موٹر وے سٹی نوشہرہ جیسے بڑے منصوبے بھی شروع کئے جائینگے پشاور کے شہری علاقوں میں ایل ای ڈی لائٹس نصب کی جائیں گی۔ناردرن سیکشن رنگ روڈ ٗورسک جمرود روڈ کی تعمیر جبکہ نئے جنرل بس سٹینڈ کا قیام بھی عمل میں لایا جائے گا۔پشاور میں میٹریل ٹیسٹنگ لیب کا قیام عمل میں لایا جائے گا ضلع پشاوراور نوشہرہ میں ورسک کنال کی لائننگ کی جائے گی ٗ پشاور میں نئے صنعتی زون کے قیام کے لئے زمین کی خریدی جائی جبکہ پشاور میں جدید فرانزک لیبارٹری کا قیام عمل میں لایا جائیگا پشاور میں سینٹرل جیل جبکہ نوشہرہ ‘ملاکنڈ اور شانگلہ میں ڈسٹرکٹ جیلوں کی تعمیر کے لئے جائزہ رپورٹس کی تیاری کے ساتھ ساتھ صوابی ڈسٹرکٹ جیل تعمیر کی جائے گی صوبے کی سطح پر منتخب شدہ جیلوں میں خواتین و نابالغ بچیوں والے سیکشن کو مزیدبہتر اور وسعت کے ساتھ ساتھ ماڈل انٹرویو کمرے بھی تیارکئے جائیں گے۔