بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / پشاور ٗ کرائمز میں ملوث گروہوں کا ڈیٹا کمپیوٹرائزڈ

پشاور ٗ کرائمز میں ملوث گروہوں کا ڈیٹا کمپیوٹرائزڈ


پشاور۔صوبائی دارالحکومت پشاور کی تاریخ میں پہلی بار پولیس نے سٹریٹ کرائمز میں ملوث گروہوں کا ڈیٹا کمپیوٹرائزڈ کرلیا ابتدائی طور پر مرتب شدہ ڈیٹا میں ڈکیتی رہزنی میں 105 ٗ نقب زنی میں 78 ٗ کار موٹر سائیکل سنیچنگ و لفٹنگ میں 35 ٗ بھتہ خوری میں 6 اور9 ملزمان اغواء کی وارداتوں میں ملوث ملزموں کو شامل کیا گیا ہے کتابچہ میں ان ملزمان کی تصاویر ٗ شناختی کارڈ زنمبرز ٗ پتہ اور دیگر ریکارڈ موجود ہے اگلے مرحلے میں مذکورہ ڈیٹا نادرا کے ساتھ منسلک کرنے کافیصلہ کیاگیا ہے ۔

اس ضمن میں رابطہ کرنے پر ایس ایس پی آپریشنز سجاد خان نے روز نامہ ’’ آج ‘‘ سے بات چیت کرتے ہوئے بتایاکہ پشاور کی تاریخ میں پہلی بار سٹریٹ کرائمز میں ملوث گروہوں کا ڈیٹا کمپیوٹرائزڈ کردیاگیا ہے جس کامقصد اگر کسی علاقے میں رہزنی ٗ چوری ٗ نقب زنی اور دیگر سٹریٹ کرائم کی واردات ہوتی ہے تو متاثر شخص نے ڈیٹا میں شامل جرائم پیشہ افرادکی تصاویر دکھائی جائیں گے تاکہ واردات میں شامل ملزموں کی شناخت ہوسکے انہوں نے کہاکہ ابتدائی طورپرمرتب شدہ ڈیٹامیں ڈکیتی ٗ رہزنی میں 105 ٗ نقب زنی میں 78 ٗ کار موٹر سائیکل سنیچنگ و لفٹنگ میں 35 ٗ بھتہ خوری میں 6 اور9 ملزمان اغواء کی وارداتوں میں ملوث ملزموں کو شامل کیاگیا ہے جبکہ مزید ڈیٹا بھی اکٹھا کیاجارہاہے ایس ایس پی آپریشنز کا کہناتھاکہ مرتب شدہ کتابچہ میں ان ملزموں کی تصاویر ٗ شناختی کارڈز نمبرز ٗ پتہ اور دیگر یکارڈز بھی موجود ہے ایس ایس پی آپریشنز کاکہناتھاکہ جرائم پیشہ افراد کے ڈیٹا کومزید مستحکم بنانے کیلئے بہت جلد اسے نادرا کے ساتھ منسلک کیاجائے تاکہ ملوث عناصر کیخلاف بھرپور کاروائی ممکن ہوسکے ۔