بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / سرکاری ٹینڈرز کی مانیٹرنگ کا فیصلہ ٗسافٹ ویئر بھی تیار

سرکاری ٹینڈرز کی مانیٹرنگ کا فیصلہ ٗسافٹ ویئر بھی تیار

اسلام آباد۔فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر)نے تمام ماتحت اداروں کو ودہولڈنگ ایجنٹس سے خریدوفروخت پر ود ہولڈنگ ٹیکس کی بروقت وصولی کو یقینی بنانے کے لیے نجی و سرکاری اداروں کی جانب سے جاری کیے جانے والے ٹینڈرز کی مانیٹرنگ کے احکام جاری کردیے۔نجی ٹی وکے مطابق فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر)کی جانب سے تمام ریجنل ٹیکس آفسز (آرٹی اوز)اور لارجر ٹیکس پیئرز یوننٹس(ایل ٹی یوز)کو ہدایت کی گئی ہے کہ الیکٹرونک و پرنٹ میڈیا میں شائع ہونے والے ٹینڈرز کے پروسیس کی مکمل مانیٹرنگ کی جائے اور جس نجی و سرکاری ادارے کی جانب سے ٹینڈر جاری کیا جاتا ہے ۔

اس ادارے کو ٹینڈر فائنل کرتے وقت جس پارٹی کو ٹینڈر دیا جائے اس سے ود ہولڈنگ ٹیکس کی کٹوتی کو یقینی بنایا جائے، اس کے علاوہ اس بارے میں سافٹ ویئر بھی تیار کیا جائے گا جس میں تمام آر ٹی اوز اور ایل ٹی یوز نجی و سرکاری اداروں کی جانب سے جاری کیے جانے والے ٹینڈرز کی تفصیلات اپ لوڈ کریں گے جس میں ٹینڈر کی مالیت اور ٹینڈر حاصل کرنے والی پارٹی کے بارے میں بھی تفصیلات و کوائف شامل ہوں گے۔

ایف بی آر کا کہنا ہے کہ سرکاری و نجی اداروں کی جانب سے اربوں روپے کے ٹینڈر جاری کیے جاتے ہیں اور بطور ود ہولڈنگ ایجنٹ ان اداروں کی ذمے داری ہے کہ جس پارٹی کو بھی ٹینڈر جاری کیا جائے اس کو رقوم کی ادائیگی کرتے وقت ودہولڈنگ ٹیکس کی کٹوتی کریں مگر اس مد میں پورا ٹیکس نہیں آرہا جس کے باعث ایف بی آر نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ پہلے مرحلے میں ٹینڈرز کی تفصیلات اکٹھی کی جائیں گی اور اس کے بعد ان کا آڈٹ کیا جائے گا۔ ایف بی آر حکام کا مزید کہنا ہے کہ اس مد میں حکومت کو اربوں روپے کا ریونیو حاصل ہوگا۔