بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / پشاورمیں احتجاج کرنیوالے متعدد ڈاکٹرز گرفتار

پشاورمیں احتجاج کرنیوالے متعدد ڈاکٹرز گرفتار

پشاور۔حیات آباد میڈیکل کمپلیکس میں ینگ ڈاکٹرز کا دوسرے روز بھی احتجاج جاری رہا، او پی ڈی بند کرنے کی کوشش پر پولیس نے ڈنڈے برسا دیئے ، متعدد ڈاکٹروں کو حراست میں لے لیا گیا ۔بدھ کوحیات آباد میڈیکل کمپلیکس پشاور میں ینگ ڈاکٹرز کی جانب سے دوسرے روز بھی احتجاج کیا گیا ۔ڈاکٹروں نے ایک بار پھر او پی ڈی کی تالہ بندی کی کوشش کی جس پر پولیس اور ڈاکٹروں کے مابین جھڑپ ہوئی ۔

پولیس نے مظاہرین کو حراست میں لے لیا گیا،پولیس کی جانب سے تشدد کے بعد ینگ ڈاکٹرز نے دیگر ہسپتالوں سے بھی ڈاکٹروں کو بلا لیا اور صوبے بھر میں ہڑتال کی کال دے دی ۔ینگ ڈاکٹرز کی جانب سے دوران ڈیوٹی فوت شدہ ملازمین کے اہل خانہ کو معاوضہ دینے ، پوسٹ گریجوایٹ میڈیکل انسٹیٹیوٹ کو تحلیل کرنے اور سروس سٹرکچر دینے کیلئے گزشتہ ایک ماہ سے مختلف ہسپتالوں میں احتجاجی مظاہرے کئے جا رہے ہیں ۔

لیڈی ریڈنگ ہسپتال کے سامنے ینگ ڈاکٹرز کی جانب سے بھوک ہڑتالی کیمپ دو ہفتے سے جاری ہے ۔ینگ ڈاکٹرز کی طرف سے لیڈی ریڈنگ ہسپتال کے چیئرمین بورڈ آف ڈائریکٹرز نوشیرواں برکی کو ہٹانے کابھی مطالبہ کیا گیا ہے ۔ نوشیرواں برکی عمران خان کے کزن بھی ہیں۔