بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / وزیر اعظم نوازشریف کل جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہونگے

وزیر اعظم نوازشریف کل جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہونگے

اسلام آباد۔پانامہ کیس کی تحقیقات ، وزیر اعظم نوازشریف آج جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہو ں گے۔ قطری شہزادے کے خط، مے فیر فلیٹس ،ذرائع آمدن ، حدیبیہ پیپرملز، مریم نواز کے زیر کفالت ہونے نہ ہونے سمیت دیگر معاملا ت پر پوچھ گچھ کی جائے گی۔ وزیر اعظم اپنے ہمراہ جے آئی ٹی کو مطلوب ریکارڈ بھی لے کر جائیں گے۔ تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم نواز شریف آج دن گیارہ بجے پانامہ کیس کی تحقیقات کیلئے سپریم کورٹ کے حکم پر قائم کی گئی۔

جے آئی ٹی کے سامنے بیان ریکارڈ کرانے کیلئے پیش ہوں گے۔ اس حوالے سے فیڈرل جوڈیشل اکیڈمی کے گردونواح میں سیکورٹی کے اقدامات سخت کر دئیے گئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق آج ڈپٹی ڈائریکٹر ایف آئی اے واجد ضیاء کی سربراہی میں تحقیقاتی ٹیم وزیر اعظم نواز شریف سے پانامہ لیکس کے تحت لگنے والے الزامات کی روشنی میں پوچھ گچھ کرے گی۔جس میں وزیر اعظم نواز شریف سے مے فیر فلیٹس ، حدیبیہ پیپر ملز، قطری شہزادے کے خط ، مریم نواز کے زیر کفالت ہونے یا نہ ہونے اور منی ٹریل کے حوالے سے سوالات کئے جائیں گے۔وزیر اعظم نواز شریف سے ہونے والی پوچھ گچھ میں حسین نواز اور حسن نواز سے کی گئی تحقیقات کو مدنظر رکھاجائے گا۔

واضح رہے کہ جے آئی ٹی اس سے قبل وزیر اعظم کے صاحبزادوں حسین نواز اور حسن نواز سے تحقیقات مکمل کر چکی ہے۔وزیر اعظم نواز شریف کی پیشی کے موقعہ پر سیکورٹی کے سخت اقدامات کئے گئے ہیں۔ پولیس، رینجرز ،ایف سی،ٹریفک پولیس اوراسپیشل برانچ کے 2500اہلکار تعینات ہوں گے۔وزیر اعظم کی پیشی کے موقعہ پر بلیو بل کے مطابق سیکورٹی فراہم کی جائے گی۔ دوسری جانب جے آئی ٹی میں پیشی سے قبل فیڈرل جوڈیشل اکیڈمی کے باہر سڑکوں کی تعمیر اور تزین و آرائش کی گئی ۔

سی ڈی اے کے ملازمین نے سڑکوں کے اطراف لگے درختوں کے بناؤ سنگھار اور جوڈیشل اکیڈمی جانے والی سڑک سے جھاڑیوں کو ہٹادیا جبکہ فٹ پاتھ پر نئی گھاس بھی لگائی گئی ہے۔ اس کے علاوہ صفائی ستھرائی کا کام کرنے والے ورکرزنے سڑکوں اور گرین بیلٹس کے اطراف سے کوڑا کرکٹ بھی صاف کردیاہے۔وزیر اعظم کی جے آئی ٹی آمد سے پہلے جوڈیشل اکیڈمی کی مرکزی سڑک کی مرمت کا عمل بھی مکمل کر لیا گیاہے، جہاں سڑک ٹوٹی ہوئی ہے وہاں پیچے لگائے گئے ہیں۔ اسلام آباد کے ریڈ زون اورخاص طورپروفاقی جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف وزیراعظم نوازشریف کی حمایت میں بینر آویزاں کئے گئے ہیں۔

بینرزمیں وزیراعظم نوازشریف کے علاوہ مریم نوازاورشہباز شریف کی تصاویربھی ہیں جب کہ ان پر’’قدم بڑھاؤ نواز شریف ہم تمہارے ساتھ ہیں‘‘ درج ہے۔وزیر اعظم نواز شریف کے سختی سے منع کرنے کے باوجود پیشی کے موقعہ پر ن لیگی کارکنان،عہدیداروں اور وزرانے 15 جون کو جوڈیشنل اکیڈمی پہنچے کا فیصلہ کیا ہے۔ جڑواں شہروں کے ن لیگی کارکنان عہدیدار وزیر اعظم نواز شریف کا جوڈیشل اکیڈمی کے باہر استقبال کریں گے۔مسلم لیگ ن کی تمام ونگزوزیر اعظم کے استقبال میں بھرپور شرکت کریں گی اور وزیر اعظم سے اظہار یکجہتی کی جائے گی۔تاہم حساس اداروں نے وزیراعظم کی پیشی کے موقعہ پر کارکنا ن کی آمد کو سیکورٹی رسک قرار دیدیا ہے۔

حساس اداروں نے اپنی رپورٹ میں کہاہے کہ پیشی کے موقعہ پر کارکنان کی آمد سے پولیس اور کارکنان میں تصادم کا خدشہ ہے۔؂دو روزقبل لیگی رہنما حنیف عباسی اور میئر راولپنڈی سردار نسیم نے بھی ان شاہراہوں کا دورہ کیا اور وزیر اعظم کی آمد کے حوالے سے ہونے والے انتظامات کی نگرانی کی۔ جبکہ سیکورٹی کا جائزہ لینے کیلئے آئی جی اسلام آباد خالد خٹک خودفٖیڈرل جوڈیشل اکیڈمی آئے۔واضح رہے کہ پاناما پیپرز کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی نے آج کو وزیر اعظم کو طلب کررکھا ہے جب کہ ان کے بڑے صاحبزادے حسین نواز 5 مرتبہ اور چھوٹے صاحبزادے حسن نواز 2 مرتبہ پیش ہوچکے ہیں۔