بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / سرکاری کالجوں کے پرنسپلوں کو خصوصی الاؤنس دینے کا فیصلہ

سرکاری کالجوں کے پرنسپلوں کو خصوصی الاؤنس دینے کا فیصلہ

پشاور۔خیبر پختونخوا حکومت نے سرکاری کالجوں کے پرنسپلوں کو 25سے 50ہزار روپے خصوصی الاؤنس اور کالجوں کو خود مختاری دینے کیلئے الگ الگ ماڈل تیار کر لئے ہیں جبکہ محکمہ اعلیٰ تعلیم میں کوالٹی انہاسمنٹ یونٹ بھی قائم کیا جا رہا ہے ٗ 2018ء تک تمام کالجوں میں بی ایس پروگرام شروع کر دیا جائیگا ٗ رواں تعلیمی سال پرائیویٹ تعلیمی اداروں سے 35ہزار طلبہ سرکاری کالجوں میں داخل ہوئے جمعہ کے روز صوبائی اسمبلی کے اجلاس میں اپوزیشن کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے اعلیٰ تعلیم کے وزیر مشتاق غنی نے ایوان کو بتایا کہ صوبے بھر کے سرکاری کالجوں کو مالی اور نتظامی خود مختاری دے رہے ہیں ۔

جس کیلئے سمری تیار کرکے وزیراعلیٰ کو ارسال کر دی گئی ہے اسی طرح کالجوں کے پرنسپلوں کو تنخواہ کے علاوہ 25سے 50ہزار روپے تک خصوصی الاؤنس دینے پر بھی اتفاق کیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے 2018ء تک صوبے میں بی ایس پروگرام کو تمام کالجوں و یونیورسٹیوں تک توسیع دینے کیلئے ڈیڈ لائن دی ہے خیبر پختونخوا میں بی ایس پروگرام شروع کر دیا گیا ہے اور 2018ء تک تمام کالجوں و یونیورسٹیوں میں بی ایس کلاسیں شروع ہو جائیں گی۔

انہوں نے کہا کہ سرکاری کالجوں سے انٹر میڈیٹ کو ختم کیا جا رہا ہے اور ان کلاسوں کو ہائیر سکینڈری سکولوں کو منتقل کیا جائیگا انہوں نے کہا کہ 2018ء تک صوبے میں سرکاری کالجوں کی تعداد 350تک پہنچ جائے گی 20کالج تعمیر ہو چکے ہیں جبکہ 50کالجوں کی عمارتیں زیر تعمیر ہیں ۔