بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ضمنی انتخابات میں حکمران جماعت کا پلڑا بھاری

ضمنی انتخابات میں حکمران جماعت کا پلڑا بھاری

پشاور۔خیبر پختونخوا میں صوبائی اسمبلی کے لیے ہونے والے بارہ ضمنی انتخابات میں حکمران جماعت کا پلڑا بھاری رہاہے جس نے بارہ میں سے پانچ ضمنی انتخابات میں کامیابی حاصل کی ہے جبکہ ایک امیدوار کوبلامقابلہ کامیاب کروا کرصوبہ میں منفرد ریکارڈ بھی قائم کردیا ہے خیبر پختونخوا میں صوبائی اسمبلی کی گیارہ نشستوں کے لیے ہونے والے ضمنی الیکشن میں دوسر ے نمبر پر ن لیگ رہی ہے جس نے دو ضمنی الیکشن جیتے ہیں جبکہ اے این پی ،جے یو آئی ف اور پی پی پی نے ایک ایک نشست اپنے نام کی ہے دو نشستوں پر حکومت کے حمایتی آزاد امیدوار کامیاب ہوئے ہیں ۔

یوں مجموعی طور پر حکمران اتحاد نے بارہ میں سے چھ اور اپوزیشن نے پانچ ضمنی انتخابات جیتے ہیں صوبہ میں 22اگست 2013ء کو ہونے والے ضمنی الیکشن میں پی کے 23مردان سے اے این پی کے احمد خان بہادر بنوں کے پی کے 70سے جے یو آئی کے اعظم خان درانی ،مردان سے حکومتی حمایت یافتہ جمشید مہمند پی کے 27اورشاہ فیصل خان ہنگوکے پی کے 42سے کامیاب ہوئے تھے 15دسمبر 2013ء کو پی ٹی آئی کے سردا ر اکرام اللہ گنڈاپور پی کے 67ڈیرہ سے کامیاب ہوئے ،ہر ی پور کے حلقے پی کے 50پر 23جنوری 2014ء کو ضمنی الیکشن ہوا جس پر پی ٹی آئی کے اکبر ایوب خان نے کامیابی حاصل کی اسی سال چوبیس اپریل کو سوات سے پی کے 86پر پی ٹی آئی کے ڈاکٹر حیدر علی نے فتح حاصل کی پانچ جون کو ایبٹ آباد میں ن لیگ نے پی کے 45پر اپنے امیدوار سردار فرید احمد خان کو کامیاب کروایا ،اور آٹھ ستمبر کو ڈیرہ کے حلقے پی کے 68سے پی ٹی آئی کے احتشام جاوید اکبر خان فاتح بن کر سامنے آئے ۔

بعدازاں 25ستمبر 2015ء کو پی پی پی کے صاحبزادہ ثنا ء اللہ خان نے اپ سیٹ کرتے ہوئے جماعت اسلامی کو اس کے مرکز یعنی دیر کے حلقہ پی کے 93پھرہروایا اور پھر بارہ مئی 2016ء کو پشاور کے حلقے پی کے آٹھ پر ن لیگ کے اربا ب وسیم نے کامیابی حاصل کی جبکہ کہ رواں برس دس مئی کو پی کے 62پرصوبائی اسمبلی کے بارہویں ضمنی الیکشن میں پی ٹی آئی نے امیدوار نے زرگل نے بلامقابلہ کامیابی حاصل کرکے نہ صرف منفردریکارڈ بنادیاہے بلکہ پی ٹی آئی کی پوزیشن بھی مزیدبہتر بنادی ہے