بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / پشاور میں پولیس اور دہشت گردوں میں جھڑپ

پشاور میں پولیس اور دہشت گردوں میں جھڑپ

پشاور۔پشاور کے نواحی علاقے چمکنی شاہ پور میں پولیس اور سکیورٹی فورسز کے ٹارگٹڈ آپریشن کے دوران جھڑپ میں 2 دہشتگرد مارے گئے جبکہ ایس ایچ او سمیت 3پولیس اہلکارشدید زخمی ہوگئے ہلاک دہشتگردوں نے خالی فلور ملز میں پناہ لے رکھی تھی جہاں سے بھاری تعداد میں اسلحہ، دستی بم ٗ خودکش جیکٹس اور بموں میں استعمال ہونیوالے آلات برآمد کرلئے گئے ہیں فائرنگ کے تبادلے میں ایس ایس پی آپریشنز معجزانہ طور پر بال بال بچ گئے آپریشن کے دوران علاقے میں شدید خوف وہراس پایاگیا اطلاع ملتے ہی پولیس اور سکیورٹی فورسز کی مزید نفری طلب کی گئی اور رات گئے تک آپریشن جاری رہے آپریشن میں ایک مبینہ طور پر ایک دہشتگرد کوگرفتار کرنے اور ایک کی فرار ہونے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔

جمعہ اور ہفتے کی درمیانی شب سحری سے قبل تھانہ چمکنی کی حدود شاہ پور کے علاقے میں ایک خالی فلور ملز میں دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پر پولیس اور سکیورٹی فورسز نے مشترکہ آپریشن شروع کیا جس کے دوران پولیس اور فلور ملز میں موجود دہشت گردوں کے مابین فائرنگ کا تبادلہ شروع ہوگیافائرنگ کے تبادلہ میں 2 شدت پسند ہلاک جبکہ ایس ایچ او تھانہ گلبہارعمر آفریدی سمیت 3 پولیس اہلکار زخمی ہوگئے، جنہیں طبی امداد کیلئے لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کردیا گیادہشت گردوں کے مابین فائرنگ کا تبادلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا جبکہ آپریشن کے اختتام پر پولیس اور بم ڈسپوزل یونٹ نے فلور ملز سے سرچنگ کے دوران 6دستی بم، 600ڈیٹونیٹرز، 7ایس ایم جیز، 4کلا شنکوف، 4پستول اور دیگر سامان برآمد کرکے دستی بموں کو ناکارہ بنا دیا۔

دوسری جانب سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس آپریشنز پشاور (ایس ایس پی) سجاد خان نے واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ زخمی ہونے والوں میں ایس ایچ او تھانہ گلبہار عمر آفریدی، انسپکٹر ضیاء اللہ اور کانسٹیبل ارشد شامل ہے جنہیں طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے اطلاع ملنے پر امدادی ٹیمیں بھی جائے وقوعہ پر پہنچ گئی تھی جبکہ ہسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی تھی، محکمہ انسدد دہشت گردی نے واقعہ کا مقدمہ درج کرکے مزید تفتیش شروع کردی ہے ۔

ادھر حملے کے وقت جیسے ہی ایس ایس پی آپریشنز نے کمان سنبھالی تو دہشتگردوں نے ان پر بھی فائرنگ کردی جس میں وہ معجزانہ طورپر بال بال بن گئے ۔پولیس اورسکیورٹی فورسز کا مشترکہ طورپر 6 گھنٹوں تک آپریشن جاری رہا تحقیقاتی رپورٹ کے مطابق آپریشن حساس اداروں کی اطلاع پرکیاگیاآپریشن میں2 دہشتگردمارے گئے 3پولیس اہلکاراور2سکیورٹی جوان زخمی ہوئے آپریشن کے دوران 6دستی بم، 4پستول، 4 کلاشنکوف ، 600 ڈیٹونیٹر، پرائما کارڈ ، خودکش جیکٹ بنانے والا سامان، خشک بیٹریاں، ٹائمرز ، موبائل سیٹس اوردستاویزات برآمدہوئے۔ ٹارگٹڈ آپریشن میں مارے جانیوالے دہشتگردوں سے موبائل فونز ٗ اہم ویڈیوز اور تصاویر برآمد کی گئی ہیں۔