بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / پاکستان کی ترقی کا مشن وزیراعظم کی قیادت میں جاری رہیگا ٗ امیر مقام

پاکستان کی ترقی کا مشن وزیراعظم کی قیادت میں جاری رہیگا ٗ امیر مقام

پشاور۔وزیر اعظم کے مشیرانجینئرامیرمقام نے کہاہے کہ پاکستانی کی ترقی کاوژن اورمشن وزیراعظم محمدنوازشریف کی قیادت میں جاری رہیگا،کوئی مائی کالعل سازشوں کے ذریعے ترقی کی راہ میں رکاوٹ حائل نہیں کرسکتا، 2018 کے عوامی جے آئی ٹی میں دودھ کادودھ پانی کاپانی ہوجائیگاا ورپاکستان مسلم لیگ(ن) پہلے کی نسبت زیادہ بھاری اکثریت سے کامیاب ہوگی۔

انہوں نے کہاکہ نام نہادتبدیلی والوں کاچہرہ عوام کے سامنے بے نقاب ہوچکاہے،انکا مقصدملکی اورعوامی خدمت نہیں اقتدارہے،تحریک انصاف عوام کی آنکھوں میں مزیددھول نہیں جھونک سکتے،تعلیمی ایمرجنسی کابانڈہ پھوٹ گیا۔ان خیالات کااظہارانہوں نے جلوزو نوشہرہ میں220کے وی گرڈسٹیشن کاسنگ بنیاد رکھنے کے بعدایک پر وقارتقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف کی حکومت میں سرکاری سکولوں کا کیا حشرہوااورکیامعیاررہ گیاحالیہ میٹرک کے نتائج عوام کے سامنے ہیں،ٹاپ ٹونٹی پوزیشن ہولڈرزمیں ایک بھی سرکاری طالب علم نہیں ہے جوتبدیلی حکومت کیلئے سوالیہ نشان ہے۔ انہوں نے کہاکہ تعلیمی ایمرجنسی سے اسد قیصر کے نجی سکول قائداعظم پبلک سکول ہی مستفیدہوئی ہے اورصرف اسی سکول میں تبدیلی آئی ہے جس میں اپنانام نہ لکھ سکنے والے بھی 80 فیصد نمبرحاصل کرسکتے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ 40ہزارنئے اساتذہ بھرتی اورسو فیصد حاضری یویقینی بنانے والوں کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے۔۔وزیراعظم کے مشیرانجینئرامیرمقام نے کہاکہ عوام اب تک350ڈیمزکاقیام،احتساب کمیشن کے ڈائریکٹرجنرل کی معطلی،خیبر اور پیڈولیکس اب تک نہیں بھولے ہیں،پیڈوکے حکام خوب بہتی گنگامیں ہاتھ دھورہے ہیں چیف ایگزیکٹیوآفیسرکی تنخواہ18لاکھ جبکہ چیئرمین کاچھ لاکھ روپے تنخواہ اوراب تک ایک مگاواٹ بجلی پیدانہ کرسکے پھربھی صوبائی حکمرانوں کے کانوں پرجوں تک نہیں رینگتی کیونکہ پختونخوا انرجی ڈویلپمنٹ آرگنائزیشن(پیڈو)کواسدعمراسلام آبادسے چلارہے ہیں اورپیڈوکے سی ای اواکبرکی بھرتی کیلئے بے قاعدگیوں کے ذریعے راہ ہموارکی گئی مگرجب ہائیکورٹ اختلاف رائے کی توصوبائی حکومت نے سی ای او کوہٹانے کی بجائے قانون میں ردوبدل کی۔

انہوں نے کہاکہ پیڈومیں بھرتیوں پرجس کمیشن نے اخترعلی شاہ کی سربراہی میں رپورٹ مرتب کی تھی کہاں ہے وہ عوام کے سامنے لایاجائے ردی میں نہ پھینکاجائے۔انجینئرامیرمقام نے کہاکہ وزیراعظم محمدنوازشریف نے حلقہNA-5کیلئے گیس کی مدمیں60کروڑروپے منظورکئے ہیں جس سے ضلع نوشہرہ میں سوئی گیس کی سہولت سے محروم لوگ سوئی گیس سے مستفیدہوجائیں گے جس پروزیراعلیٰ پرویزخٹک کومحمدنوازشریف کاشکریہ اداکرنا چاہئے کیونکہ نوشہرہ کے عوام کے دیرینہ مطالبہ پوراکرنے کاسہرامحمدنوازشریف اورانکی جماعت کے سرہے۔

انجینئرامیرمقام نے کہاکہ شکیل درانی کے چارج شیٹ کاجواب اب تک کیوں نہیں دیاگیا،لاوی پاورپراجیکٹ چترال کا ٹھیکے سے جس کمپنی کو نوازا گیاوہ سوفیصدغیرقانونی اورقانون کے برعکس ہے،وہ 50میگاواٹ پراجیکٹ بنانے کے شرط پرپوراہی نہیں اترتے تاہم شکیل درانی کے چلے جانے کے بعد ہی ٹھیکہ دیاگیا۔ان تمام کوتاہیوں،نااہلی اور ناقبت اندیشی کاجواب عمران خان اورپرویزخٹک کو 2018کے عوامی جے آئی ٹی میں دیناہوگا۔