بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ایل او سی پر فائرنگ، بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنرکی دوبارہ دفتر خارجہ طلبی

ایل او سی پر فائرنگ، بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنرکی دوبارہ دفتر خارجہ طلبی

اسلام آباد ۔بھارتی فورسز کی ایل او سی پر بلا اشتعال فائرنگ سے 5 شہریوں کی شہادت پر دفتر خارجہ نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کو ایک بار پھر طلب کرکے احتجاج ریکارڈ کرایا ۔دفتر خارجہ کے بیان کے مطابق 8 جولائی کو ایل او سی پر چری کوٹ اور ستوال سیکٹر پر بھارتی فورسز کی فائرنگ سے مزید 3 پاکستانی شہری شہید ہوگئے جس کے بعد بھارتی فورسز کی بلااشتعال فائرنگ سے شہید ہونے والوں کی تعداد 5 ہوگئی جس پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کو دوبارہ طلب کرکے ایل او سی پر بھارتی فورسز کی بلا اشتعال فائرنگ پر احتجاج ریکارڈ کرایا ہے اور سارک کے ڈائریکٹر محمد فیصل نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کو دفتر خارجہ طلب کرکے احتجاج مراسلہ بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کے حوالے کیا جس میں کہا گیا کہ بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ سے مزید 3 شہری شہید ہوئے ہیں اور بھارت 2003 کے سیز فائر معاہدے کی مسلسل خلاف ورزی کررہا ہے۔

خیال رہے کہ ہفتے کے روز بھارتی فورسز نے ایل او سی پر چڑی کوٹ اور ستوال سیکٹر میں جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بلااشتعال فائرنگ کی اور شہری آبادی کو نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں 5 پاکستانی شہری جاں بحق ہو گئے تھے ۔واضح رہیہفتہ کو پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر)کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ بھارتی فورسز نے چڑی کوٹ اور ستوال سیکٹر میں سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بلااشتعال فائرنگ کرکے شہری آبادی کو نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں ایک لڑکی سمیت 2 شہری شہید ہوئے جس پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفترخارجہ طلب کرکے احتجاج کیا گیا تھا جب کہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے مزید 3 شہری شہید ہوگئے جس پر آج پھر جے پی سنگھ کو دفتر خارجہ طلب کیا گیا۔