بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / اعظم طارق قتل ٗملزم کے ریڈوارنٹ منسوخ کرنیکا فیصلہ

اعظم طارق قتل ٗملزم کے ریڈوارنٹ منسوخ کرنیکا فیصلہ

اسلام آباد۔ کالعدم سپاہ صحابہ کے سابق سربراہ مولانا اعظم طارق کے قتل میں گرفتار مرکزی ملزم سبطین کاظمی کے ریڈوارنٹ کو منسوخ کروانے کیلئے ایف آئی اے نے انٹرپول سے رجوع کرنے کا فیصلہ کرلیا، وزارت داخلہ کی منظوری کے بعد ایف آئی اے سبطین کاظمی کے ریڈوارنٹ کی منسوخی کیلئے انٹرپول کو خط لکھے گی، ملزم سبطین کاظمی کو برطانیہ جاتے ہوئے اسلام آباد ایئرپورٹ سے گرفتار کیا گیا تھا۔جمعہ کو ذرائع کے مطابق کالعدم سپاہ صحابہ کے سابق سربراہ مولانا اعظم طارق اور پنجاب سمیت ملک کے دیگر علاقوں میں دہشت گردی کی کارروائیوں کے الزام میں مطلوب سبطین کاظمی کی بیرون ملک سے گرفتاری کیلئے متعلقہ محکموں کی درخواست پر وزارت داخلہ نے ملزم کے ریڈوارنٹ جاری کروانے کی منظوری دی تھی اوراب اڑھائی ماہ قبل سبطین کاظمی کی گرفتاری عمل میں آنے کے بعد پہلے سے جاری شدہ ریڈ وارنٹ کو منسوخ کرانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

ایف آئی اے نے ریڈ وارنٹ کی منسوخی کیلئے سمری وزارت داخلہ کو ارسال کر دی ہے۔ ایف آئی اے ذرائع کے مطابق وزارت داخلہ کی منظوری کے بعد سبطین کاظمی کے ریڈوارنٹ کی منسوخی کی درخواست انٹرپول کو ارسال کی جائے گی۔ واضح رہے کہ سبطین کاظمی اسلام آباد پولیس کی تحویل میں ہے اور تھانہ گولڑہ درج مولانا اعظم طارق کے قتل کے مقدمے میں انسداد دہشت گردی کی عدالت میں ملزم کا ٹرائل جاری ہے۔