بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / پشاور میں ایلیٹ فورس جوان کی پراسرار ہلاکت معمہ

پشاور میں ایلیٹ فورس جوان کی پراسرار ہلاکت معمہ

پشاور۔ تھانہ آغا میر جانی شاہ (یکہ توت ) کے علاقے شیخ حیدر بابا قبرستان سے ایلیٹ فورس کے جوان کی پراسرار ہلاکت کی معاملہ گھمبیر ہورتحال اختیار کرگیا جوان نے خودکشی کی یا اسے قتل کیاگیا پولیس تاحال کسی نتیجے پر نہ پہنچ سکی تاہم پستول اور جائے وقوعہ سے ملنے والے خول لیبارٹری ارسال کردےئے گئے ہیں دوسری جانب موبائل تحویل میں لیکر ڈیٹا حاصل کیاجارہاہے پولیس کے مطابق گزشتہ روز اطلاع ملی کہ شیخ حیدر بابا قبرستان میں ایک نعش پڑی ہے جس کی ہلاکت فائرنگ کے باعث ہوئی ہے ۔

اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچ گئی اور نعش قبضے میں لیکر پوسٹ مارٹم کیلئے مردہ خانہ منتقل کردی بعدازاں نعش کی شناخت رحبت کے نام سے ہوئی جو ایلیٹ فورس کا سپاہی تھا پولیس کے مطابق جائے وقوعہ سے ملنے والے خول اور پستول تحویل میں لیکر لیبارٹری ٹسٹ کیلئے ارسال کردےئے گئے ہیں تاکہ معلوم ہوسکے کیا فائرنگ اسی پستول سے ہوئی ہے دوسری جانب ابتدائی تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ جاں بحق اہلکار گھر سے نکلتے وقت اپنے ساتھ 35ہزار روپے بھی لے گیا تھا۔

دوسری جانب جب نعش ملی تو اس کی گاڑی بھی موجود تھی جاں بحق اہلکار کچھ عرصہ قبل ایس پی رورل کا گن مین تھاجبکہ اب سنٹرل جیل میں ڈیوٹی انجام دے رہا تھا ادھر رابطہ کرنے پر ایس ایچ او یکہ توت واجد خان نے بتایاکہ مختلف زاویوں پر تفتیش جاری ہے اور اس بات کاتعین کیاجارہاہے کہ آیا اہلکار نے خودکشی کی ہے یا اسے قتل کیاگیا ہے کیونکہ جب اس کی نعش کے پاس موبائل اور پستول پڑا تھا جبکہ جیب میں رقم بھی موجود تھی ایس ایچ او کے مطابق آئندہ چند روز میں صورتحال واضح ہوجائے گی ۔