بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / نواز شریف اور میرا کیس ایک جیسا نہیں‘ عمران خان

نواز شریف اور میرا کیس ایک جیسا نہیں‘ عمران خان

اسلام آباد۔ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے اثاثہ جات کی تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا ہے کہ 1984ء میں 60لاکھ کا لندن میں فلیٹ خریدا جو کہ بعد میں 1لاکھ 17ہزار پاؤنڈ کا تھا نیو ساؤتھ ویلز کے لئے کرکٹ کھیلی 20ہزار پاؤنڈ ملے 20سال پیسے کمائے لیکن سارا پیسا ملک میں لے کے آیا چوری کرکے ملک سے باہر نہیں لے گیا ان کا اور وزیراعظم نواز شریف کا کیس ایک جیسا نہیں ہے ،کبھی بھی ٹیکس چوری کی نہ ہی منی لانڈرنگ کی۔

سپریم کورٹ میں ایک ایک روپے کے تفصیلات موجود ہے جس دن نواز شریف اڈیالہ جیل جائے گا اس دن نئے پاکستان کی بنیاد رکھی جائے گی خواجہ آصف گھٹیا آدمی 4سال سے چھوٹے الزامات لگا رہا ہے اسے بھی کینسر ہوسکتا ہے ان خیالات کا اظہار پی ٹی آئی کے سربراہ عمران خان نے بنی گالہ میں صحافیوں سے گفتگو کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ شریف فیملی نے سپریم کورٹ میں جعلی دستاویزات پیش کیے ہیں اور جعل سازی کی ہے اب چوری پکڑی گئی تو کہتے ہیں کہ ساری دنیا چور ہے شریف خاندان عوام کو بے وقوف بنانے کی کوشش کررہا ہے عمران خان نے کہا کہ منی لانڈرنگ دنیا کا سب سے بڑا جرم ہے کیونکہ اس میں پیسے اور ٹیکس کی چوری ہوتی ہے جس سے ملک قرضوں میں ڈوب جاتا ہے نواز شریف اپنے کیس کا مقابلہ میرے کیس کے ساتھ کررہے ہیں میں نے تو ملک سے باہر پیسہ کما کر بنی گالہ میں گھر خریدا اور کوئی ملک کا پیسہ چوری کر کے ملک سے باہر نہیں لے گیا۔

انہوں نے کہا کہ عوام مجھ پر اعتماد کر کے شوکت خانم اور نمل یونیورسٹی کو زکو ت اور خیرات سمیت عطیات دیتی ہیں اور لوگ مجھے ایماندار سمجھ کر اعتماد کرتے ہیں عمران خان نے کہا کہ لندن فلیٹ 1984ء میں 60لاکھ کا خریدا تھا اور اس کی مورگیج بھی دیدی جو کہ بعد میں 1لاکھ 17ہزار پاؤنڈ کا بنا لندن فلیٹ کا پیسہ جمائمہ کہ اکاؤنٹ کے ذریعے آیا جو کہ ساری ٹرازیکشن عدالت میں پیش کردی ہے لیکن پھر بھی چیف جسٹس نے کہا کہ لندن کا فلیٹ کس طرح خریدا گیا تو اس کی بھی دستاویزات پیش کردی ہے۔

انہوں نے کہا کہ 20سال پیسہ ملک سے باہر کمایا ہے نیو ساؤتھ ویلز کیلئے کرکٹ کھیلی 20ہزار پاؤنڈ وہاں سے ملے آسٹن رابرٹ نے مجھے اور ظہیر خان سمیت 50کرکٹرز کو سائن کرکے معائدہ کیا تھا تو وہاں سے بھی آمدں ہوئی عمران خان نے کہا کہ میں عوام کے سامنے حقائق اس لئے لارہا ہوں کیونکہ میں ایک عوامی نمائندہ ہوں لیکن آج ایک اخبار نے میرے دستاویزات کو قطری خط کی متترادف قرار دیا ہے ایسی رپورٹ کے ذریعے عوام کو دھو کا دیا جارہا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ انہوں نے تو فلیٹ خریدنے بیچنے اور پیسے منتقلی کی تمام دستاویزات عوام اور عدالت کے سامنے پیش کردیے لیکن نواز شریف نے تو ایک روپے کا بھی سچ نہیں بتایا بلکہ اُلٹا عدالت میں جھوٹ بولا پی ٹی آئی چئیرمین نے دعویٰ کیا کہ ان کے سارے پیسے ان کے بچوں کے نام نہیں بلکہ ان کے اپنے نام پر ہیں لیکن شریف خاندان کی تو اربوں روپے کے پراپرٹی ان کے بچوں کے نام پر ہے حسن شریف لندن میں 600کروڑ کے فلیٹ میں رہتا ہے ایک سوال کے جواب میں عمران خان نے کہا کہ خواجہ آصف گھٹیا آدمی چار سال سے الزام تراشی کررہاہے شوکت خانم پر الزام لگانے سے پہلے اسے سوچنا چاہیے کہ اسے بھی کینسر ہوسکتا ہے ۔

سینٹ کی کمیٹی میں انکشاف ہوا ہے کہ 480ارب روپے کے سرکلر ڈیٹ میں ایک ارب 80ہزار کی خرد برد ہے خواجہ آصف کو چیلنج کرتا ہوں کہ شوکت خانم کے ا کاؤنٹ میں ایک ورپے کی خرد برد ظاہر کرکے دکھائے البتہ 3ملین ڈالر کا شوکت خانم کا مسئلہ بھی ایک ماہ کی اندر حل ہوگیا تھا اور وہ 3ملین ڈالر بھی شوکت خانم کے اکاؤنٹ میں واپس آگیا تھا خواجہ آصف جیسے لوگوں کو ہڈیاں ملتی ہے جس کی بنیاد پر وہ دوسرے لوگوں پر الزام تراشی کرتے ہیں عمران خان نے کہا کہ جو لوگ نوا ز شریف کی حمایت کرتے ہیں وہ بھی مجرم ہیں ۔

اس وقت ساری قوم سپریم کورٹ کے فیصلے کی منتظر ہیں کیونکہ مریم نواز نیلسن اور نیسکول سمیت 4محلات کی مالکن نکلی ہے جن کی قیمت 600کروڑ ہے نواز شریف دوبئی کمپنی کے چیئرمین نکلے ہیں جو کہ 10ہزار درہم مہینے کی تنخواہ لیتے تھے اور اکامہ پر ویزا لیا ہوا تھا جب کہ یہاں پر وزیر اعظم بھی تھا گلف اسٹیل ملز جس نے انڈے دیے اس کی بھی دبئی کے جسٹس ڈپارٹمنٹ نے تصدیق کی ہے کہ گلف اسٹیل مسلسل خسارے میں جارہی تھی اس کے علاوہ اب پوری قوم اس اندھیری رات سے نجات پانے کی منتظر ہے کیونکہ حکمران جماعت 30سال سے چوری کرکے ملک سے پیسے باہر لے جا رہی تھی جس سے ملک اربوں روپے کا مقروض ہوا نواز شریف جس دن اڈیالہ جیل جائے گا اس دن نئے پاکستان کی بنیاد رکھی جائے گی۔