بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبر پختونخوا اتحادیوں میں اختلافات ٗمخالفین سرگرم

خیبر پختونخوا اتحادیوں میں اختلافات ٗمخالفین سرگرم

پشاور۔صوبہ میں دوسری بار قومی وطن پارٹی اور پی ٹی آئی کے مابین پیداہونے والی دوریوں کے بعدصوبہ میں نمبرز گیم شروع کرانے والے عناصر سرگرم ہوگئے ہیں جے یو آئی اورن لیگ کے ہارڈ لائنرز کے ساتھ ساتھ پی ٹی آئی کے اپنے ناراض اراکین بھی خاصے متحر ک ہوچکے ہیں مولانا فضل الرحمان کی طرف سے گذشتہ روز کے بیان کے بعد نمبر ز گیم میں تیز ی لانے کی کوششیں بھی جاری ہیں اپوزیشن کے توڑ اور اپنے باغی اورناراض اراکین کی کمی پوری کرنے کے لیے صوبائی حکومت نے بھی مخالف جماعتوں میں نقب لگانے کی تیاریاں شروع کردی ہیں تاہم صورت حال کادارومدارکیوڈبلیو پی اور اے این پی کے مؤقف پر ہے۔

دونوں جماعتوں کے ممبران کی تعدادپندرہ ہے اوردونوں نے کسی قسم کی مہم جوئی سے لاتعلق رہنے کااعلان کررکھاہے خیبرپختونخوا اسمبلی میں اس وقت کل ممبران کی تعداد 123ہے جن میں سے پی ٹی آئی 61ممبران کے ساتھ سب سے بڑی جماعت ہے جبکہ اس کی اتحاد ی جماعت اسلامی کے اراکین کی تعداد 7ہے جبکہ ایک آزاررکن شاہ فیصل بھی حکومت کے اتحاد ی ہیں یوں 123کے ایوان میں حکومت کواب بھی 69اراکین کی حمایت حاصل ہے تاہم بابرسلیم ،جاوید نسیم ،ضیاء اللہ آفریدی ،امجد آفریدی اور قربان خان نے کافی عرصہ سے پارٹی اور حکومت سے راہیں جدا کی ہوئی ہیں جس کے بعد قومی وطن پارٹی کے دس ممبران کی شمولیت کے اپوزیشن اراکین کی تعداد بڑھ کر 54سے بڑھ کر 59ہونے کاامکان ہے جن میں سے جے یو آئی اورن لیگ کے سولہ سولہ اراکین شامل ہیں ۔

پی پی پی کے 6اوراے این پی کے 5اراکین شامل ہیں یوں معاملہ 64اور 59تک پہنچ سکتاہے یہی وجہ ہے نمبرز گیم میں تیز ی لانے کی کوششیں جاری ہیں اس ضمن میں اسلام آبادسے گرین سگنل ملنے کاانتظار بھی کیاجارہاہے جبکہ اے این پی اور کیو ڈبلیو پی کو منانے کے لیے ن لیگ اور جے یو آئی کی مرکز ی قیادت خودمیدان میں آسکتی ہے ذرائع کے مطابق نئے وزیر اعظم کے حلف اٹھانے کے ساتھ نمبرز گیم کے معاملہ میں مزید تیز ی آنے کاامکان ہے ادھرصوبائی حکومت نے بھی تمام تیاریاں مکمل کرلی ہیں اور اس کے ذرائع کاکہناہے کہ صوبہ میں چھانگامانگا کی سیاست لانے کی ہر کوشش بری طرح سے ناکام ہوگی