بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / عائشہ گلالئی کے مستعفی ہونے کی اصل وجہ سامنے آ گئی

عائشہ گلالئی کے مستعفی ہونے کی اصل وجہ سامنے آ گئی

پشاور۔پی ٹی آئی کی رکن قومی اسمبلی عائشہ گلالئی کی طرف سے پارٹی قیادت پر بدترین نوعیت کی الزام تراشی کے پیچھے انکو این ون سے ٹکٹ نہ دینے اور اسلام آبادمیں جشن فتح کے موقع پر خطاب نہ کرنے دینے کی وجوہات سامنے آئی ہیں اس سلسلے میں پارٹی کے سینئر رہنماؤں نے بتایاہے کہ عائشہ گلالئی این اے ون سے الیکشن لڑنے کی خواہشمند تھیں مگر پارٹی قیادت کی طرف سے ان کو گرین سگنل دینے سے انکا ر کردیا گیاتھا کیونکہ پی پی پی چھوڑ کر آنے والے سابق ٹاؤ ن ناظم حاجی شوکت علی نے پی ٹی آئی کی طرف سے این اے ون میں پہلے سے ہی بھرپور رابطہ مہم چلار کھی ہے ۔

اسی طرح عائشہ گلالئی کی خواہش تھی کہ اتوار کو اسلام آبادمیں ہونے والے جلسہ میں انکو خواتین کی نمائندگی کاموقع دیتے ہوئے خطاب کرنے دیا جائے مگر ایسا نہ ہوسکا جس کے بعد اب الزام تراشی کی انتہاکرتے ہوئے انہوں نے مستعفی ہونے کااعلان کردیاہے ۔ دوسری جانب خیبرپختونخوا حکومت کے ترجمان و صوبائی وزیر آبنوشی اوراطلاعات شاہ فرمان نے عائشہ گلا لئی کے بیان پر ردعمل کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان تحریک انصاف میں خواتین کو جو عزت دی جاتی ہے۔

اس کی واضح مثال ڈاکٹر مہرتاج روغانی کاصوبائی اسمبلی کا ڈپٹی سپیکر ہونا اورشرین مزاری کا قومی اسمبلی میں چیف وہیپ ہونا ہے ۔انہوں نے یہاں سے جاری ایک بیان میں کہا ہے کہ پی ٹی آئی نے خواتین کو جومقام دیاہے شاید ہی کسی پارٹی نے دیا ہو ۔صوبائی ترجما ن کہا ہے کہ عائشہ گلا لئی کو ایک عام کارکن ہونے اورپارٹی کاکوئی عہدہ نہ رکھنے کے باوجود خواتین کی مخصوص نشست پررکن قومی اسمبلی منتخب کرایا گیااس سے بڑھ کر انہیں اورکیا عزت اورمقام دیاجاتا۔

انہوں نے کہا کہ عائشہ گلا لئی این اے ۔ون پرالیکشن لڑنے کی ضمانت چاہتی تھی جس پرانہیں پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے بتایا کہ نشستوں پر انتخاب پارلیمانی پارٹی کی منظوری سے ہوگا اورانہیں بھی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس اوران کے فیصلے تک صبرکرنا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ان حالات میں عائشہ گلا لئی کاموجودہ بیان معنی خیز ہے ۔شاہ فرمان نے کہا کہ عوام باشعور ہے اوروہ جانتے ہیں کہ اس بیان کے ڈورکی تاریں کہاں سے ہل رہی ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن مہم میں مخالفین اوران کے خاندان کی عجیب وغریب تصویریں بنانا مسلم لیک (ن)کی گندی سیاست کاوطیرہ ہے مگرعوام چوروں اورلٹیروں کی ذاتی مفاد پرمبنی سیاست کوسمجھ چکے ہیں اوراب وہ ان کے دھوکے میں نہیں آئیں گے جس کاثبوت ان لٹیروں کوآنے والے الیکشن میں عوام کی طرف سے ملنے والی ناکامی سے مل جائیگا۔