بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / سرکاری ملازمین کی سکیم میں اربوں روپے کی کمی کا انکشاف

سرکاری ملازمین کی سکیم میں اربوں روپے کی کمی کا انکشاف

پشاور۔صو بائی سر کاری ملازمین کے لئے شروع کی گئی ریٹائر منٹ اینڈ ڈیتھ کمپنسشن سکیم میں ایک ارب دو کروڑ 90 لاکھ روپے کی کمی کا انکشاف ہوا ہے۔ صو بائی حکومت نے سر کاری ملازمین سے بقا یا جات کی وصولی کا فیصلہ کیا ہے اس غرض سے نومبر 2014 ء سے ستمبر2016 ء تک قابل وصول رقم دو ارب 66 کروڑ 20 لاکھ روپے کی وصولی کے لئے حکمت عملی تر تیب دے دی ہے ٗاس رقم کی وصولی کے لئے فیصلہ کیا گیا ہے کہ گریڈ ایک سے دس تک کے ملازمین سے بقایا جات کی رقم 36 اقساط ٗ گریڈ گیارہ سے سو لہ تک 24 اقساط اور گریڈ سترہ اور اس سے اوپر تک بارہ ماہانہ اقساط میں وصول کی جائے گی ۔

چیف سیکر ٹری کی زیر صدارت بورڈ کے اجلاس میں ریٹائر منٹ اینڈ ڈیتھ کمپنسشن سکیم کے قانون میں سقم کی نشاندہی کی گئی جس کے لئے ترامیم کی تجویزدی گئی ہے ان ترامیم کی رو سے وہ وفاقی ملازمین جو صو بے میں سول اسامیوں پر بذریعہ تبادلہ ٗ ڈیپوٹیشن یا کنٹریکٹ تعینات ہیں سکیم سے مستفید نہیں ہوں گے ٗ ان ترامیم میں سابق ویلفےئر فنڈ یعنی گروپ انشورنس فنڈ کو موجودہ سکیم کا حصہ بنانے کی تجویز دی گئی ہے ۔اسی طرح اکاؤنٹنٹ جنرل کو پابند کیا گیا کہ وہ اس سکیم کے تحت کاٹی گئی رقوم دس روز میں حوالے کرے گا جبکہ اس عرصے کو پندرہ دن تک بڑھانے کی تجویز دی گئی ہے ٗ بورڈ نے ان ترامیم کی سفارش کی کہ محکمہ قانون کی مشاورت کے بعد حتمی شکل دیں ۔