بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / صوابی میں مخالفین کا بھی خیر مقدم کرینگے ٗ اسد قیصر

صوابی میں مخالفین کا بھی خیر مقدم کرینگے ٗ اسد قیصر

پشاور ۔ سپیکر خیبر پختونخوا اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ ضلع صوابی کو گیس کی فراہمی پر تیزی سے کام جاری ہے جس سے سیاسی مخالفین کی نیندیں حرام ہو گئیں ہیں۔صوابی کی ترقی وخوشحالی کے لئے مثبت کام کرنے پر حریفوں کا بھی خیر مقدم کریں گے۔وزیر اعظم صوابی کے لئے بڑا پیکج لے کر آئیں میں خود ان کا استقبال کروں گا،لیکن عوام کی ترقی و خوشحالی کی راہ میں روڑے اٹکانے والے سازشی عناصر کو عوام کی طاقت سے بے نقاب کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے موضع مینئی ضلع صوابی کو گیس کی فراہمی کے اعلان کے موقع پر مینئی اصلاحی جرگہ کی جانب سے منعقدہ عوامی اجتماع سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پرتحصیل ناظم ٹوپی سہیل یوسفزئی، اصلاحی جرگہ کے صدر محمد اشفاق خان،پی ٹی آئی صوابی کے رہنما حاجی رنگیز خان کے علاوہ ویلج کونسل ناظمین،بلدیاتی نمائندے اور علاقہ عمائدین بھی کثیر تعدادمیں موجود تھے۔

عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے سپیکر اسد قیصر نے مینئی کو گیس کی فراہمی کا باقاعدہ اعلان کرتے ہوئے کہا کہ 10کروڑ 54 لاکھ روپے کی لاگت سے موضع مینئی کو گیس کی فراہمی پر فوری طور کام کا آغاز کر دیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ 3 کروڑ 60 لاکھ روپے مین لائن اور باقی ماندہ فنڈ ڈسٹری بیوشن لائن کے لئے مختص کئے گئے ہیں۔سپیکر نے کہا کہ موجودہ حکومت کے دور میں ضلع صوابی کی تعمیر و ترقی اور عوام کی خوشحالی کے لئے44 ارب روپے کے ریکارڈ فنڈ سے ترقیاتی منصوبوں پر تیزی سے کام جاری ہے جس میں بیشتر منصوبے تکمیل کے مراحل میں ہیں۔انہوں نے کہا کہ ترقیاتی منصوبوں کے مکمل ہونے سے صوابی کا نقشہ بدل جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ 27 اگست کو چیئرمین تحریک انصاف عمران خان اور وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک1 ارب 22 کروڑ روپے کی لاگت سے تعمیر ہونے والی صوابی وومن یونیورسٹی کاعظیم الشان افتتاح کریں گے جسے 2 سال کے قلیل عرصے میں مکمل کیا جائے گا۔سپیکر نے مزید کہا کہ موضع مینئی کے عوام سے ان کا دیرینہ تعلق ہے اور یہاں کے عوام نے انہیں ہمیشہ بھرپور سپورٹ کیا ہے اور یہی وجہ ہے کہ حلقے کے دیگر علاقوں کی نسبت انہوں نے ترجیحی بنیادوں پر مینئی کی ترقی کے لئے اقدامات کئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مینئی میں اب تک 40 کروڑ روپے کی لاگت سے بجلی،پینے کے صاف پانی، سکولوں کی تعمیر اور اپ گریڈیشن،سڑکوں کی تعمیر و بحالی،سولر ٹیوب ویلوں اورسولر لائٹس کی تنصیب سمیت دیگر کئی اہم منصوبوں پر تیزی سے کام جاری ہے۔انہوں نے واضح کیا کہ مینئی کو گیس کی فراہمی پر ترجیحی بنیادوں پر کام کیا جائے گا،لیکن انہوں نے اس امر بھی افسوس کا اظہار کیا کہ ضلع صوابی سے تعلق رکھنے والے بعض مقامی سیاسی مخالفین گیس کی فراہمی کے بارے میں نہ صرف جھوٹا پروپیگنڈہ کر رہے ہیں بلکہ آئے روزوفاقی حکومت میں شامل ایک نام نہادپختون لیڈر کے ذریعے صوابی کو گیس کی فراہمی کی راہ میں روڑے اٹکانے کی بے سود کوششوں میں اپنی توانائی ضائع کر رہے ہیں کیونکہ یہاں کے عوام ان کی اصلیت جان چکے ہیں۔

انہوں نے سیاسی مخالفین کو دعوت دی کہ وہ ضلع صوابی کی ترقی اور یہاں کے عوام کی محرومیوں کے خاتمے کے لئے حکومتی کوششوں کا ساتھ دیں۔سپیکرصوبائی اسمبلی نے مینئی کے لئے علیحدہ بجلی فیڈر کے قیام کے لئے تحصیل ناظم ٹوپی اورمینئی اصلاحی جرگہ کو ہدایت کی کہ وہ اس سلسلے میں تجاویز مرتب کرکے ایک ہفتے کے اندر رپورٹ پیش کرے۔انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت مینئی میں بجلی فیڈر کے قیام کے لئے 18 کروڑ روپے فراہم کرے گی جس سے یہاں بجلی کے مسائل حل ہوجائیں گے۔

اسد قیصر نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت عوام سے کئے گے وعدوں کی تکمیل پر تیزی سے گامزن ہے اور عوام کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کے لئے تمام تر وسائل بروئے کارلارہی ہے۔