بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / فاٹا کو دیگراکائیوں کے برابرلاناحکومت کی ترجیح

فاٹا کو دیگراکائیوں کے برابرلاناحکومت کی ترجیح

اسلام آباد۔وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے منگل کو فاٹا کے سینیٹرز،وزیر صحت اور سی پیک پارلیمانی کمیٹی کے چیئرمین نے علیحدہ علیحدہ ملاقات کی ،ترجمان وزیراعظم ہاوس کے مطابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے سی پیک پارلیمانی کمیٹی کے چیئرمین سینیٹر مشاہد حسین سید نے ملاقات کی اس موقع انہوں نے وزیر اعظم کو سی پیک پارلیمانی کمیٹی کی رپورٹ پیش کی۔ملاقات میں وزیر اعظم نے کہا کہ سی پیک نہ صرف پاکستان بلکہ پورے خطے کے لئے گیم چینجر ہے ، سی پیک کے تحت توانائی سمیت دیگر منصوبے جلد از جلد مکمل کئے جائیں گے ۔

وزیر اعظم سے مسلم لیگ (ن)خیبر پختونخواہ کے صدر امیر مقام نے بھی ملاقات کی جس میں ملکی سیاسی صورت حال اور ترقیاتی منصوبوں پر بات چیت کی گئی ۔اس سے قبل وزیراعظم کی زیر صدارت پولیو کے خاتمے سے متعلق اعلی سطح کا اجلاس ہوا، وزیراعظم نے اجلاس کی صدارت کی ۔اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ پولیو کا خاتمہ ہماری اگلی نسل کی بقا کا معاملہ ہے اس لئے ہم پولیو کے خاتمے کی پوری ذمہ داری لیتے ہیں۔ شاہد خاقان عباسی نے پولیو کے خاتمے کیلئے قومی ٹاسک فورس کا اجلاس فوری بلانے کی ہدایت کی اور کہا کہ وہ خود اس کی نگرانی کریں گے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ پولیو کے مرض کے خاتمے کے لئے صوبائی حکومتوں ، قانون نافذ کرنے والے ادارے ، ضلعی انتظامیہ ، سول سوسائٹی اور عالمی امدادی اداروں کی طرف سے کوششوں کی ضرورت ہے۔ وزیراعظم نے پولیو وائرس کی روک تھام میں موثر پیش رفت کے حوالے سے وزارت قومی صحت اور انسداد پولیو کے قومی پروگرام کی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا۔قومی صحت کی وزیر سائرہ افضل تارڑ اور پولیو کے خاتمے کے قومی پروگرام کی چیئرپرسن عائشہ رضا فاروق نے انہیں پولیو کے خاتمے کے حوالے سے پروگرام کے بارے میں آگاہ کیا۔

پولیو اجلاس سے قبل وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے فاٹا کے سینیٹرز نے ملاقات کی اور انہیں وزارت عظمی کا عہدہ سنبھالنے پر مبارک باد دی۔اس مو قع پر سینیٹرز نے وزیرا عظم کو بتایا کہ دہشت گردی کے باعث فاٹا کی ایجنسیوں میں بنیادی ڈھانچہ تباہ ہو چکا ہے ، جس کے بحالی وقت کی اہم ضرورت ہے۔ملاقات کے موقع پر وزیر اعظم نے فاٹا کے سینیٹرز کو یقین دلایا کہ حکومت فاٹا کے عوام کے لئے تمام سماجی شعبوں میں حقوق کو یقینی بنائیں گی، ہم فاٹا میں تعمیری تبدیلی کے لئے اصلاحات کررہے ہیں تاکہ فاٹا کو وفاق کی دیگر اکائیوں کے برابر لاسکیں۔ملاقات میں وزیراعظم نے فاٹا کے سینیٹرز کو یقین دلایا کہ جلد وہ فاٹا کو دورہ کریں گے اور ترقیاتی پیکج کا اعلان کریں گے