بریکنگ نیوز
Home / دلچسپ و عجیب / تدفین سے قبل مردوں کو خوبصورت بنانے والا مقابلہ خاتون گورکن نے جیت لیا

تدفین سے قبل مردوں کو خوبصورت بنانے والا مقابلہ خاتون گورکن نے جیت لیا


ٹوکیو: جاپان میں جنازے کی تدفین سے قبل مُردے کو خوبصورت بنانے کا ملک گیر مقابلہ ایک 23 سالہ نوجوان خاتون نے جیت لیا۔

رینو ترائی ایک زندہ شخص کو جنازے کے طور پر تیار کررہی ہیں اور انہوں نے یہ مقابلہ جیت لیا ہے ۔ فوٹو: رائٹرز

اپنی جیت پر تبصرہ کرتے ہوئے  رینو تیرائی نے کہا، ’’میں نے اس مقابلے کے لیے ہر روز پریکٹس کی تھی۔ میں نے ہر عمل کی ویڈیو بنائی اور خود سے پوچھا کہ کیا یہ اچھا عمل ہے یا نہیں اور میں لاش کے ساتھ نرمی اور احترام کا رویہ رکھتی ہوں۔‘‘

جاپان کے شنتومذہب کے تحت مرنے کے بعد جنازہ ناپاک ہوجاتا ہے اور صرف قریبی رشتے داروں کی موجودگی میں ہی جب اسے تیار کیا جاتا ہے تو اس کے گناہ دھل جاتے ہیں اور وہ ’دوسری دنیا‘ کے لیے تیار ہوجاتاہے۔ اس ضرورت کے تحت جاپان بھر میں مردے کو تیار کرنے والے خاص لوگوں کی ضرورت بڑھ گئی ہے۔

اس مقابلے میں سینکڑوں افراد نے اپنے فن کا مظاہرہ کیا اور مردوں کو اچھی طرح تیار کرنے کا طریقہ پیش کیا۔ اس مقابلے میں زندہ انسانوں کو لٹا کر ان کو تیار کیا گیا اور پس منظر میں جنازے کی موسیقی مدھم سروں میں چل رہی تھی۔ چار ججوں تمام شرکا نے گورکن کے کام کو نوٹ کیا۔

ایک جج نے کہا کہ مقابلہ جیتنے والی رینو تیرائی نے اپنے ہاتھوں کو خوبصورتی سے استعمال کیا اوراسی بنا پر اسے انعام کا حقدار قرار دیا گیا ہے۔