بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ایجوکیشن سروس ایکٹ کے نفاذ کا حتمی فیصلہ نہیں کیا ٗ اسد قیصر

ایجوکیشن سروس ایکٹ کے نفاذ کا حتمی فیصلہ نہیں کیا ٗ اسد قیصر

پشاور۔سپیکر خیبر پختونخوا اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت نے صحت،تعلیم،پولیس اور پٹوار سمیت عوامی خدمات کی فراہمی کے مختلف اداروں میں اصلاحات نافذ کرکے ان اداروں کا وقار بحال کرکے نہ صرف ان کو عوامی امنگوں کے مطابق بنا دیا ہے بلکہ ان کی کارکردگی اور استعداد کار میں بھی اضافہ کیا ہے ۔حکومتی اصلاحات کا مقصد کسی کے بنیادی حقو ق صلب کرنا یا مفادات کو نقصان پہنچانا نہیں بلکہ اداروں میں اصلاحات کا عمل تمام شراکت داروں کی باہمی مشاورت اور وسیع تر عوامی مفاد کو مد نظر رکھ کیا جاتاہے۔

ایجوکیشن سروس ایکٹ2017 کے نٖفاذ کے حوالے سے حکومت نے ابھی کوئی حتمی فیصلہ نہیں کیا اس سلسلے میں اساتذہ اور تمام شراکت داروں کے تحفظات اور خدشات کو مد نظر رکھ کر بھرپور مشاورت کے بعد ہی اسے لاگو کرنے کے حوالے سے کوئی فیصلہ کیا جائے گا۔

ان خیالات کا اظہار سپیکر خیبر پختونخوا اسمبلی نے آل ٹیچرز گرینڈ الائنس خیبر پختونخوا کے کثیر رکنی وفد سے سپیکر ہاؤس پشاور میں ملاقات کے دوران کیا اسد قیصر نے وفد سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت اساتذہ کی فلاح و بہبود اور معاشرے میں ان کی عزت نفس اور وقار کو برقرار رکھنے کے لئے تمام تر اقدامات کر رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ اساتذہ بھی اپنی ذمہ داری احسن طریقے سے ادا کرتے ہوئے معیاری تعلیم کی فراہمی اور طلبہ کی بہتر تربیت کے لئے تمام تر توانائیاں بروئے کار لائیں۔