بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / پشاور میں 2ڈاکٹر بھی ڈینگی کا نشانہ بن گئے

پشاور میں 2ڈاکٹر بھی ڈینگی کا نشانہ بن گئے

پشاور۔صوبائی دارالحکومت میں 2ڈاکٹروں سمیت مزید 248افراد میں ڈینگی کی تصدیق کر دی گئی ہے جبکہ گزشتہ 24گھنٹوں کے دوران صوبے کے 5اضلاع میں 22افراد وائرس سے متاثر ہوئے ہیں ڈینگی رسپانس یونٹ کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 1682 افراد کے خون کی سکریننگ کی گئی جن میں 270کے خون میں وائرس پایا گیا اب تک ڈینگی سے متاثرہ افراد کی تعداد 11ہزار 58ہو گئی ہے جبکہ صوبے کے مختلف ہسپتالوں میں اب بھی ڈینگی کے 381مریض زیر علاج ہیں ۔

دوسری جانب خیبر پختونخوا حکومت اور متعلقہ اداروں کے تمام تر اقدامات کے باوجود ڈینگی کو قابو نہیں کیا جا سکا ٗ گزشتہ روز ڈینگی وائرس کے باعث ایک خاتون سمیت مزید 2افراد چل بسے جس کے بعد ڈینگی سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 30 تک پہنچ گئی ہے ڈینگی رسپانس یونٹ نے بھی مزید دو افراد کے ڈینگی سے جاں بحق ہونے کی تصدیق کر دی ہے سفید ڈھیری کے رہائشی 45سالہ
احسان اللہ ولد محمد اشرف اور بورڈ بازار کی رہائشی 50سالہ خاتون ارمرہ دختر محمد دین کو 19ستمبر کو ہسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں پر دونوں مریضوں کے خون میں وائرس کی تصدیق ہوئی تھی تاہم دونوں گزشتہ روز جاں بحق ہوگئے دریں اثناء پشاور کے علاقے تہکال میں 14سالہ بچے کی بھی ڈینگی سے ہلاکت کا دعویٰ کیا گیا ہے لیکن ڈینگی رسپانس یونٹ نے بچے کی ڈینگی سے ہلاکت کی تصدیق نہیں کی ۔