بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / چوہدری نثار اور ن لیگ میں اختلافات شدت اختیار کر گئے

چوہدری نثار اور ن لیگ میں اختلافات شدت اختیار کر گئے


اسلام آباد۔ مسلم لیگ (ن) میں مریم نواز اور چوہدری نثار علی خان گروپ میں اختلافات شدت اختیار کرگئے ، سابق وزیر داخلہ نے شہباز شریف سے ہونی والی ملاقات میں نواز شریف کا مریم نواز کو پارٹی صدر بنانے کے پیغام پر صاف انکار کرتے ہوئے کہا کہ آج نواز شریف اور ان کی پارٹی کے بحران کی ذمہ دار مریم نواز اور اس کا مخصوص گروپ ہے وزیراعلیٰ پنجاب آج ہفتہ کو لندن روانہ ہونگے جہاں پر چوہدری نثار کے موقف سے نواز شریف کو آگاہ کرینگے میڈیا رپورٹس کے مطابق بدھ کے روز وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار سے ملاقات کی تھی۔

جس میں شہباز شریف نے چوہدری نثار کو سابق وزیراعظم نواز شریف کا اہم پیغام پہنچایا کہ وہ مریم نواز کو پارٹی کا صدر بنانے کے حامی ہیں جس کا چوہدری نثار نے واضح طور پر دو ٹوک الفاظ میں کہا کہ مریم نواز کی قیادت میں کسی صورت بھی کام نہیں کیا جاسکتا کیونکہ آج جو پارٹی اور نواز شریف کے حالات ہیں اور جن بحرانوں سے پارٹی گزر رہی ہے ان تمام کی ذمہ دار مریم نواز اور اس کا قریبی گروپ ہے دوسری جانب شہباز شریف اور حمزہ شہباز بھی مریم نواز کیخلاف ہیں کیونکہ پہلے شہباز شریف کو پارٹی کا صدر بنانے کا فیصلہ کیا گیا تھا لیکن خاندان میں چپقلش کے باعث پارٹی صدر کا فیصلہ تبدیل کرلیا گیا ۔

اس لئے شہباز شریف اور چوہدری نثار ایک پیج پر ہیں شہباز شریف آج ہفتہ کو چوہدری نثار کا پیغام لیکر لندن روانہ ہونگے اور وہاں پر بڑے بھائی نواز شریف کو آگاہ کرینگے ذرائع کے مطابق نواز شریف کے لندن روانہ ہونے کے بعد چوہدری نثار علی خان سے مختلف اوقات میں اراکین پارلیمنٹ اور سینئر رہنماؤں سے ملاقاتیں کیں ہیں اور چوہدری نثار کے موقف کی تائید کی ہے امکان ہے کہ کچھ عرصے میں مسلم لیگ (ن) میں چوہدری نثار علی خان کا ایک بہت بڑا گروپ سامنے آئے گا ۔