بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ہائیکورٹ کا نجی ہسپتالوں کو ڈینگی ٹیسٹ قیمتیں کم کرنیکا حکم

ہائیکورٹ کا نجی ہسپتالوں کو ڈینگی ٹیسٹ قیمتیں کم کرنیکا حکم

پشاور۔پشاورہائی کورٹ کے جسٹس وقاراحمدسیٹھ اور جسٹس غضنفرعلی پرمشتمل دورکنی بنچ نے نجی ہسپتالوں کو ڈینگی سے متعلق ٹیسٹ کی قیمتیں کم کرکے عدالت میں پیش کرنے کے احکامات جاری کردئیے ہیں جبکہ ڈینگی سے متعلق حکومتی اقدامات کو ناکافی قرار دیاہے اورکہا ہے کہ نجی ہسپتالوں کو بھی اس میں اپناکردار ادا کرناچاہئیے فاضل بنچ نے سیف اللہ محب ایڈوکیٹ کی جانب سے ڈینگی میں اضافے کے خلاف دائررٹ کی سماعت کی۔

اس موقع پر مرسی ہسپتال ٗ نارتھ ویسٹ ٗ آرایم آئی ٗ کویت ہسپتال اورشہرکے دیگربڑے نجی ہسپتالوں کی انتظامیہ عدالت میں پیش ہوئی اورعدالت عالیہ کے فاضل بنچ نے ڈائریکٹرجنرل ہیلتھ کو ہدایت کی کہ وہ پہلی فرصت میں جمعہ کے روزان ہسپتالوں کی انتظامیہ کے ساتھ ملاقات کرے اورڈینگی ٹیسٹ کے ریٹس کاتعین کیاجائے کیونکہ بعض ہسپتال زیادہ رقم وصول کررہے ہیں اوراس حوالے سے مشترکہ لائحہ عمل طے کرکے عدالت میں پیش کیاجائے ۔

اس موقع پرڈی جی نے بتایاکہ سرکاری ہسپتالوں میں مفت طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں ڈینگی کے خاتمے کے لئے پشاوربھرمیں سپرے کیاجارہا ہے اورگھرگھرمہم شروع کی گئی ہے جبکہ ہسپتالوں میں پہلے ہی اس حوالے سے رش زیادہ ہے جبکہ آگاہی مہم بھی شروع کی گئی ہے سیف اللہ محب نے عدالت کوبتایا کہ مقامی افراد کو داخل نہیں کیاجاتااورانہیں فارغ کردیاجاتاہے جبکہ جو سپرے کیاجارہا ہے وہ غیرمعیاری ہے اوراس کے کوئی مثبت اثرات مرتب نہیں ہورہے ہیں۔

اس موقع پرجسٹس وقاراحمدسیٹھ نے اپنے ریمارکس میں کہاسرکاری ہسپتالوں میں جان بوجھ کرمشینری کوخراب کردیاجاتاہے تاکہ مریضوں کو نجی ہسپتالوں اورلیبارٹریوں کو بھجوایاجاسکے اوروہاں ان مریضوں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹاجاتاہے ہرنجی ہسپتال اپنی مرضی کی فیسیں وصول کررہے ہیں اورمریضوں کو جان بوجھ کرنجی ہسپتالوں بھجوایاجاتاہے جبکہ ڈینگی کی روک تھام کے لئے حکومتی اقدامات ناکافی ہیں انسانی جانیں انتہائی اہم ہے پہلے زمانے میں ہوائی جہاز سے سپرے ہوتاتھاعدالت نے ڈی جی ہیلتھ سے نجی ہسپتالوں کی ا نتظامیہ سے ملاقات کرکے جامع رپورٹ عدالت میں پیش کرنے کاحکم دیا ۔