بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / کراچی ٗ محرم میں دہشت گردی کا منصوبہ ناکام، 5 دہشت گرد ہلاک

کراچی ٗ محرم میں دہشت گردی کا منصوبہ ناکام، 5 دہشت گرد ہلاک

کراچی۔پولیس نے محرم الحرام میں دہشتگردی کی کوشش ناکام بناتے ہوئے مقابلے کے بعد 5 دہشت گردوں کو ہلاک کردیا۔ایس ایس پی ملیر کراچی را وانوار کے مطابق پولیس نے خفیہ اطلاع پر سچل کے علاقے میں موجود دہشت گردوں کے ٹھکانوں پر کارروائی کی۔ پولیس کا گھیرا دیکھ کر دہشتگردوں نے فائرنگ کردی اس دوران انہوں نے دستی بم بھی پھینکے۔ جوابی کارروائی میں 5 دہشت گرد ہلاک ہوگئے۔

کارروائی کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے را انوار نے کہا کہ ہلاک ہونے والے دہشت گرد، بینک ڈکیتی، ٹارگٹ کلنگ اور دیگر کارروائیوں میں ملوث تھے، ان تمام کا مجرمانہ ریکارڈ موجود ہے۔ ہلاک ہونے والے دہشت گردوں نے کراچی میں تباہی کا منصوبہ بنایاتھا، ان پر کئی دنوں سے نظر رکھی ہوئی تھی تاہم ان کے فرار ہونے کے خدشے کے پیش نظر علاقے میں ہنگامی طور پر کارروائی کی گئی۔ایس ایس پی ملیر نے کہا کہ ہلاک ہونے والوں میں ایک دہشتگرد عامر شریف بھی ہے جو کہ القاعدہ کا اہم رکن تھا،عامر ڈرون ٹیکنالوجی کا ماہر انجینئر تھا، ہلاک دہشت گرد ڈرون ٹیکنالوجی سے کسی بھی اہم جگہ کو نشانہ بنانے کا منصوبہ بنا رہے تھے، دہشت گردوں نے ڈرائیور کے بغیر چلنے والی ایک کار بھی بنائی تھی۔

انہوں نے بتایا کہ ہلاک ہونے والے دیگر 4 دہشت گردوں میں سے ‘ملی’ نامی ایک نوجوان کالعدم تحریک طالبان پاکستان(ٹی ٹی پی(میں تھا، جس کا ساتھی امیر حمزہ عباس ٹان حملے کے کیس میں جیل میں قید ہے۔ایس ایس پی راو انوار کے مطابق ملی کا مجرمانہ ریکارڈ موجود ہے اور وہ سیکیورٹی فورسز پر حملوں، فرقہ وارانہ قتل اور بینک ڈکیتیوں میں بھی ملوث رہ چکا ہے۔انہوں نے مزید بتایا کہ یہ مختلف عسکریت پسند گروپوں کے لوگ ہیں، جو اب ایک ہوگئے ہیں اور ملک میں فساد پھیلانے کی کوشش کر رہے ہیں جن کے قبضے سے 3 خودکش جیکٹس اور بھاری اسلحہ بھی برآمد ہوا۔