بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / نواز شریف پیشی ٗاحتساب عدالت میں وزراء کا داخلہ بند

نواز شریف پیشی ٗاحتساب عدالت میں وزراء کا داخلہ بند

اسلام آباد۔سابق وزیر اعظم نواز شریف کی احتساب عدالت میں آج پیشی کے موقع پر جوڈیشل کمپلیکس میں غیر متعلقہ افراد کا داخلہ بند ہوگا۔پولیس کے مطابق صرف سائلین کے وکلا اور کورٹ رپورٹرز کو عدالت میں داخلے کی اجازت ہو گی، مجاز اشخاص کی فہرستیں ناکوں اور جوڈیشل کمپلیکس پر تعینات اہلکاروں کو فراہم کر دی گئی۔

دوسری طرف پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف کی احتساب عدالت میں دوسری پیشی پر خصوصی سیکورٹی پلان ترتیب دیا گیا ہے ۔ ایک ہزار کے قریب پولیس اہلکار تعینات ہونگے، جوڈیشل کمپلیکس کے گرد اور چھت پر پولیس اہلکار تعینات ہونگے۔جوڈیشل کمپلیکس کے قریب پولیس ناکہ ،تلاشی اور سرچنگ بھی ہوگی۔اسلام آباد ٹریفک پولیس نے بھی پیشی کے موقع پر ٹریفک پلان جاری کر دیا۔

ٹریفک پولیس کا کہنا ہے کہ شہری اس دوران کسی بھی مشکل سے بچنے کے لیے متبادل راستوں کا استعمال کریں۔پیشی کے دوران کشمیر ہائی وے جی الیون سگنل سے سروس روڈ بند ہوگی، اسلام آباد چوک سے، جی ٹین، جی الیون جانے والے شہری کشمیر ہائی وے سے پراجیکٹ موڑ جاسکتے ہیں، جبکہ سروس روڈ ساوتھ جی الیون ڈبل روڈ ترمزی چوک سے جی الیون سگنل بند ہوگی۔ ادھروفاقی وزیر داخلہ نے شکوہ کیاکہ رینجرز نے چیف کمشنر کی بات ماننے سے انکار کردیا اور عدالت کی سیکورٹی رینجرز نے سنبھال لی رینجرز کے کمانڈر کو بلایا تو وہ روپوش ہوگیا۔

یہ نہیں ہوسکتا کہ میرے ماتحت ادارے کہیں اور احکامات لیں ،سابق وزیر اعظم نواز شریف کی احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پراحتساب عدالت میں داخلے سے روکے جانے پر اسسٹنٹ کمشنر پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ کوئی بنانا ری پبلک نہیں بلکہ جمہوری ملک ہے۔ انہوں نے اسسٹنٹ کمشنر سے کہا کہ آپ مجھے ابھی لکھ کر دیں کہ رینجرز نے کیسے ٹیک اوور کیا۔