بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ملک بچانے کیلئے انتخابات کے علاوہ کوئی راستہ نہیں،عمران خان

ملک بچانے کیلئے انتخابات کے علاوہ کوئی راستہ نہیں،عمران خان

اسلام آباد۔ پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ کرپٹ خاندان کو بچانے کیلئے ملک اور اداروں کو تباہ کیا جارہا ہے، کیا وزیراعظم کایہ کام رہ گیا ہے کہ اتنے بڑے مجرم کی چوری چھپائے ،شریف خاندان مالی معاملات ثابت نہیں کرسکے، جمائما نے آج آخری ثبوت بھی بھیج دیاہے، 40سال سے لیکر آج تک اپنی ساری منی ٹریل عدالت کو دیدی ہے،احسن اقبال کو جمہوریت کی الف، ب بھی نہیں آتی،احسن اقبال کو پتہ تھا کہ رینجرز تعینات ہے تو وزیرداخلہ احتساب عدالت کیوں گئے۔

لوگ سپریم کورٹ اور جے آئی ٹی کے ساتھ کھڑی ہے، ہم نے منصوبہ بندی کرلی ہے کہ عوام کے پاس جائیں گے،ملک کو بچانے کیلئے نئے انتخابات کے علاوہ کوئی راستہ نہیں ہے،مجرم کو بچانے کیلئے قانون سازی کی جارہی ہے۔ وہ پیرکو یہاں پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔انہوں نے کہا کہ صفائی دینے کے بجائے باقیوں کو بھی چور کہا جارہاہے،پروپگنڈہ کہا جارہا ہے، کہ نواز شریف چورہے تو باقی بھی چور ہیں۔

شریف خاندان سے پوچھا گیا کہ اربوں روپیہ کیسے آیا توایک بھی ٹرانزکشن نہیں بتائی،میں باہر سے کمائی کرکے پیسہ پاکستان لے کر آیا ہوں،میرا پیسہ بنکوں کے ذریعے پاکستان آیا،مریم صفدر نے جو اربوں روپے کی جائیداد لی وہ نواز شریف کا پیسہ تھا جو باہر گیا ، نواز شریف کے بچوں نے اربوں روپے کی جائیدادیں لیں اور چھپائیں، ملک کے سب سے بڑے مجرم سے مجھے کمپیئر کیا جارہا ہے۔

یہ لوگ دستاویزات پیش کرینگے،تو اس میں مریم صفدر ہی بینیفشری اونر سامنے آئے گی۔ساٹھ لاکھ کا 1984میں اپارٹمنٹ خریدا گیا ، ساڑھے 6لاکھ ڈالر کی منی ٹریل تھی،جس میں سے 5لاکھ ڈالر کی منی ٹریل دے چکا ہوں ،میں عدالت میں اپنی تمام منی ٹریل دے چکا ہوِں،میں نے خود کو احتساب کیلئے پیش کیا ہواہے،احسن اقبال وہی کہہ رہے ہیں جو ڈان لیکس کا بیانیہ ہے،انہوں نے کہا کہ جو بینک بند ہوچکا تھا آج جمائما نے اس کی ٹرانزیکشن بھی بھیج دی ہے،40سال سے لیکر آج تک کی ساری منی ٹریل دے دی ہے،قومی اسمبلی میں الیکشن اصلاحات بل روکنے کی کوشش کریں گے۔

مجرموں کو تحفظ دینے کے لیے ادارہ تباہ کررہے ہیں،مجرم کیلئے قانون بنایا جارہاہے ،کیا وزیراعظم کا یہی کام ہے کہ وہ مجرم کی چوری چھپائیں،جمائمانے آج ساڑھے پانچ لاکھ پا?نڈکی ٹرانزیکشن بھی بھیج دی ہے، میرا فلیٹ ایک لاکھ 17ہزار پا?نڈ کا تھا، سار اپیسہ قطری شہزادے نے بھیجا ہے جس سے انہوں نے جائیدادیں بنائیں،یہ بھی نہیں بتایا کہ حسن نواز 6سوکروڑ کے گھرمیں کیسے رہتا ہے،میں اپنی قوم کے پاس جاؤں گا ان کو تیار کروں گا، ن لیگ ٹکرا? کی جانب جارہی ہے،نئے انتخابات کے سواکوئی چارہ نہیں ہے۔احسن اقبال کو جمہوریت کی الف ب بھی نہیں آتی،عجیب بات ہے کہ کرپٹ شخص کو پارٹی صدر بنایا جارہاہے۔

احتساب عدالت میں میڈیا موجود ہونی چاہیے تاکہ لوگوں کوپتاہ چلے جب احسن اقبال کو پتاہ تھا کہ رینجرز تعینات ہے تو وہ عدالت کیوں گئے، شاہ محمود قریشی کو اپوزیشن لیڈر ہونا چاہیے،امید ہے ن لیگ میں لوگوں کے ضمیر جاگیں گے، انہوں نے کہا کہ چیئرمین نیب کے انتخاب کا مرحلہ آرہا ہے، لوگ سپریم کورٹ اور جے آئی ٹی کے ساتھ کھڑے ہیں،ہم نے منصوبہ بندی کردی ہے،اب عوام کے پاس جائیں گے،اپنی مرضی کے نیب بل کی بھرپور مخالفت کی جائے گی ،ایف بی آر میں کرپشن اور چوری کا میں نہیں ورلڈ بینک کہہ رہاہے۔ایف بی آر میں3ہزار200ارب کی کرپشن اور چوری ہے، جمہوریت بچانے کے لیے نہیں کرپشن چھپانے کے لیے اقدامات ہورہے ہیں۔