بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ڈائریکٹرجنرل پی ڈی اے کیخلاف تحقیقات کا آغاز

ڈائریکٹرجنرل پی ڈی اے کیخلاف تحقیقات کا آغاز

پشاور۔قومی احتساب بیوروخیبرپختونخواکے ڈائریکٹرجنرل بریگیڈیئر(ر)فاروق ناصراعوان کی زیرصدارت نیب خیبرپختونخوا میں ریجنل بورڈمیٹنگ (RBM) کا انعقاد کیاگیا۔اجلاس میں ڈائریکٹرز،ایڈیشنل ڈائریکٹرز،کیس آفیسر،سینئرلیگل کنسلٹنٹ اوردیگرمتعلقہ افسران بھی شریک تھے۔ریجنل میٹنگ بورڈمیں کئی کیسز کے حوالے سے تحقیقات کی منظوری دیدی گئی۔

پشاورڈویویلپمنٹ اتھارٹی کے ڈائریکٹرجنرل،محمدسلیم حسن وٹوکیخلاف مبینہ طورپر مختلف منصوبوں میں بدعنوانی کرنے پرتحقیقات کاآغازکیاگیا، مبینہ طورپرڈائریکٹرجنرل پی ڈی اے محمدسلیم حسن وٹونے ڈائریکٹرجنرل پی ڈی اے کی رہائشگاہ کی بحالی،جی ٹی روڈوجمرود روڈروڈپرسٹریٹ لائٹس کی تنصیب اورڈیجیٹل ہارڈنگ بورڈمیں بدعنوانی کی ہے۔علاوہ ازیں محمدسلیم حسن وٹونے ریگی ماڈل ٹاؤن کی سڑکوں کی تعمیر،فیز 5میں فوڈسٹریٹ اورحیات آبادمیں ٹف ٹائلزکے ٹھیکے اپنے منتخب افرادکومیرٹ کے بغیردیئے،گھوسٹ ملازمین کورکھ کر جونیئرافسران کوغیرقانونی طورپرترقی دی۔

ڈائریکٹر جنرل پی ڈی اے محمدسلیم حسن وٹونے حکام کوباب پشاورمنصوبے کی تکمیل کے حوالے سے غلط اطلاعات دیتے ہوئے خود اوراپنے منتخب ومنظورنظرافراد کو اعزازیہ بھی دلوایا،موصوف نے پی ڈی اے کے پیرول پرنجی وکلاء کے خدمات ذاتی طورپرحاصل کی۔یہاں یہ بات قابل ذکرہے کہ پشاورہائیکورٹ نے محمدسلیم حسن وٹوکی دائرشدہ پٹیشن پرفیصلہ دیتے ہوئے نیب خیبرپختونخواکو موصوف کیخلاف تحقیقات کرنے کی اجازت دی۔آربی ایم اجلاس میں ایجنسی ایجوکیشن آفیسرفاٹااورایف آرزکے حکام اوراہلکاروں کیخلاف بھی تحقیقات کی منظوری دیدی گئی، مبینہ طورپرفاٹاکے ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ میں گھوسٹ ملازمین کام کررہے ہیں۔

جن میں کئی ملازمین ایجنسی ایجوکیشن آفیسرکے اہلکاروں کی ملی بھگت سے دودو تنخواہیں لے رہے ہیں۔بورڈاجلاس میں تحصیل میونسپل ایڈمنسٹریشن کے چیف میونسپل آفیسر(سی ایم یو)،ضلع کوہاٹ کے اختیارات کے غلط استعمال اور قواعدوضوابط کے برعکس مختلف کیڈرکی اسامیوں پرتعیناتی کیخلاف بھی تحقیقات کی منظوری دیدی گئی۔ہریپورگرڈسٹیشن کے سابق سپرنٹنڈنٹ گل حبیب کیخلاف بھی تحقیقات کی منظوری کی سفارش کردی گئی،مبینہ طورپرسپرنٹنڈنٹ گل حبیب نے 45.620ملین روپے کے اثاثے بنائے ہیں جوانکے آمدنی سے کئی گنا زیادہ ہیں۔