بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / غیر قانونی پریکٹس کرنیوالے ڈاکٹر قانون کے شکنجے میں

غیر قانونی پریکٹس کرنیوالے ڈاکٹر قانون کے شکنجے میں

پشاور۔ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی نے ملک بھر میں ڈاکٹروں اور ادویات ساز وں کی غیر قانونی پریکٹسز کے خلاف قانون سازی کے اصولی فیصلے کے پیش نظرڈرافٹ تیارکر لیا ہے اب ادویا ت ساز کمپنی ڈاکٹروں کی مالی معاونت یا انہیں بیرونی دورے نہیں کر ا سکیں گی۔

اس حوالے سے پی ایم ڈی سی سے بھی مشاورت شروع کردی گئی ہے ڈرگ ریگولٹری اتھارٹی کے ذرائع کے مطابق غیر قانونی پریکٹسز میں ملوث کمپنیوں کیخلاف کاروائی کے دوران جرمانہ بھی کیا جائے گا اور ان کمپنیوں پر کریمنل ایکٹ بھی لاگو ہو سکتا ہے ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی نے رواں سال 13ادویات سا ز اداروں کے لائسنسز غیر معیاری ادویات بنانے پر منسوخ کئے ہیں 23ادویات ساز اداروں کو غیر معیاری ادویات بنانے کے باعث پروٹیکشن سے روک دیا ہے۔