بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / بانجھ جوڑوں کیلئے غیر قانونی بچہ پیدا کرنا خلاف شریعت قرار

بانجھ جوڑوں کیلئے غیر قانونی بچہ پیدا کرنا خلاف شریعت قرار

لاہور۔بانجھ جوڑوں کے لئے کسی اور عورت سے غیر قانونی طریقے سے بچہ پیدا کرنے کو خلاف شریعت قرار دیا گیا ہے ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق محکمہ قانون پنجاب نے سول لا کے کنٹریکٹ ایکٹ میں ترمیم تجویز کی ہے کہ فیڈرل شریعت کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں آئندہ کرائے کی ماں معاہدے کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہو گی ۔

اس معاہدے کی فوجداری قانون کے مطابق سزا کا تعین بھی زیر غور ہے ،جسے بعد میں اس بل میں شامل کیا جائے گا ۔ فیڈرل شریعت کورٹ نے 18فروری2017 کو اپنے فیصلے میں عورت سے غیر قانونی طریقے سے بچہ پیدا کرنے کو انتہائی حساس اور پچیدہ سوال قرار دیتے ہوئے اسے شریعت کے خلاف قرار دیا ہے ۔