بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / کوئٹہ میں ٹارگٹ کلنگ،5 افراد جاں بحق

کوئٹہ میں ٹارگٹ کلنگ،5 افراد جاں بحق

کوئٹہ۔صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں ٹارگٹ کلنگ کے واقعہ میں نامعلوم مسلح موٹرسائیکل سواروں کی مری آباد سے ہزار گنجی جانیوالی گاڑی پر اللہ ڈنہ روڈ پر فائرنگ کے نتیجے میں 5 افراد جاں بحق جبکہ1 شدید زخمی ہو گیا حملہ آور موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے لاشیں ہسپتال منتقل کر دی گئی جاں بحق ہونیوالوں کے لواحقین اور عزیز واقارب نے شہداء چوک علمدراروڈ پر میتیں رکھ کر احتجاجی دھرنا دیا وزیراعلیٰ بلوچستان نے واقعہ کی مذمت کر تے ہوئے آئی جی پولیس سے رپورٹ طلب کر تے ہوئے ہزار گنجی جانیوالے لوگوں کو کانوائے کی شکل میں لانے اور لے جانے کی ہدایت کر دی ۔

صوبائی وزیر داخلہ دھرنے کے شرکاء اور لواحقین سے مذاکرات کے لئے پہنچ گئے تفصیلات کے مطابق سوموار کی صبح کوئٹہ کے علاقے مری آباد سے ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے لوگ ہزار گنجی، سبزی منڈی گاڑی پر جا رہے تھے کہ تھانہ گوالمنڈی کے قریب اللہ ڈنہ روڈ پر جب گاڑی پہنچی تو نامعلوم موٹرسائیکل سواروں نے گاڑی پر اندھا دھند فائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں گاڑی میں سوار صالح محمد بڑیچ، محمد علی،سید سرور،خادم حسین ، حسین علی موقع پر جاں بحق جبکہ ایک شخص احمد علی سکنہ شانگلہ شدید زخمی ہو گیا واقعہ سے علاقے میں خوف وہراس پھیل گیا حملہ آور موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے ۔

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس، فرنٹیئر کور کا عملہ موقع پر پہنچ گیا اور علاقے کو گھیرے میں لے کر زخمی اور لاشوں کو سول سنڈیمن ہسپتال منتقل کیا گیا لاشیں ضروری کا رروائی کے بعد ورثاء کے حوالے کر دی گئی ہلاک ہونیوالوں میں سے 4 کا تعلق ہزارہ برادری سے ہے جو مری آباد سے گاڑی میں ہزار گنجی سبزی منڈی جا رہے تھے کے راستے میں ان پر حملہ کیا گیا لاشیں لے کر ان کے لواحقین اور ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے لو گوں نے یوم شہداء چوک علمدارروڈ پر لاشیں رکھ کر احتجاجی دھرنا دیا اور واقعہ کے خلاف شدید نعرہ بازی صوبائی وزیر داخلہ میر سرفراز احمد بگٹی احتجاجی دھرنے میں پہنچ گئے اور دھرنا کے شرکاء سے مذاکرات کئے اور خطاب کیا ۔

جبکہ وزیراعلیٰ بلوچستان نواب ثناء اللہ زہری نے واقعہ کی مذمت کر تے ہوئے قائمقام آئی جی پولیس بلوچستان محمد ایوب قریشی سے واقعہ کی رپورٹ طلب کر تے ہوئے ہزار گنجی سبزی منڈی جانیوالے ہزارہ برادری کے لو گوں کے تحفظ کو یقینی بنا نے کے لئے انہیں پولیس کی سیکورٹی فراہم کر کے انہیں کانوائے میں لانے اور لے جانے کی ہدایت کی ہے یاد رہے کہ اس سے قبل بھی کوئٹہ کے مختلف علاقوں میں ہزار گنجی ، سبزی منڈی جانے اور آنیوالے ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے لو گوں کی گاڑیوں پر متعدد بار حملے کئے گئے جس میں درجنوں افراد ہلاک ودرجنوں زخمی ہو ئے ہیں پولیس نے واقعہ کا مقدمہ درج کرکے ملزمان کی تلاش شروع کر دی۔