بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبر پختونخوا میں ڈی سیز او ر ضلعی دفاتر کو نئی ذمہ داریاں تفویض

خیبر پختونخوا میں ڈی سیز او ر ضلعی دفاتر کو نئی ذمہ داریاں تفویض


پشاور۔خیبر پختونخوا حکومت نے تما م اضلاع میں اصلاحات کے نفاذ کے تحت اعلیٰ سر کار ی افسروں اور اہم محکموں کو نئی ذمہ داریاں اور اختیارات سونپ د یئے ہیں جسکا مقصد صوبے میں گڈگورننس کا قیام عمل میں لانا ہے ۔ذرائع کے مطابق صوبائی حکومت نے تمام اضلاع میں تعینات ڈپٹی کمشنر ز اختیارات کے سلسلے میں ضلعی پولیس آفیسر اورضلعی محکموں کے ساتھ مشاورت کے پابند بنادےئے گئے ہیں ۔

اِس کے علاوہ ڈپٹی کمشنر ز ہفتہ وار اور ماہانہ ایکشن پلان ترتیب دیں گے تاکہ اضلاع میں سر کار ی اُمور خوش اسلوبی سے انجام پا سکیں ۔ ڈپٹی کمشنرز تفویض کردہ کاموں میں تسلسل اور شفافیت برقرار رکھنے کے ذمہ دار ہونگے اِس سلسلے میں ڈپٹی کمشنر ز کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ پولیس کے ساتھ بلا تعطل رابطے میں رہنے کیلئے فوکل پرسن تعینات کر یں ۔ پولیس اپنے متعلقہ ضلع میں امن وامان کے قیام اوردیگر ناخوشگوار حادثات سے نمٹنے کیلئے خصو صی پلان تر تیب دے گی تمام ضلعی ادارے و دفا تر اپنے متعلقہ ڈپٹی کمشنر کو روز مرہ معاملات او ر دیگر سرکاری کاموں کے متعلق وقتافوقتا آگاہ کریں گے ۔

بتایا گیا ہے کہ اہم صوبائی محکموں کو بھی کارگردگی بہتر بنانے کی غرض سے نئی ذمہ داریاں سونپ دی ہیں ، متعلقہ قوانین کے تحت اشیائے خوردونوش کی قیمتوں کو برقرار رکھنا، ذخیرہ اندوزی اور تجاوزات کے خلاف کاروائی ڈپٹی کمشنرز کی ذمہ دار ہوگی جبکہ دودھ اور دیگر کھانے پینے کی چیزوں میں ملاوٹ کی روک تھام محکمہ خوارک ، غیر قانونی اسپیڈ بریکرز کو ہٹانا محکمہ مواصلات ، غیر قانونی کان کنی کے خلاف کاروائی محکمہ معدنیات ، غیر معیاری ادویات و غیر قانونی میڈیکل سٹورز کے خلاف ایکشن محکمہ صحت ، زائد المیعاد کیڑے مار ادویات محکمہ زراعت، سیاحتی مقامات پر قائم ہوٹل ، ٹریول ایجنسیا ں ، رینٹ اے کار اور غیرقانونی طور پر تاریخی مقامات کی کھدائی کے خلاف کاروائی محکمہ سیاحت و آثار قدیمہ کی ذمہ داری ہوگی ۔