بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / مشال قتل کیس کا مرکزی گواہ اپنے بیان سے منحرف

مشال قتل کیس کا مرکزی گواہ اپنے بیان سے منحرف


ہری پور۔ طالب علم مشال خان قتل کیس کا مرکزی گواہ اپنے بیان سے منحرف ہو گیا قتل کیس کی اگلی سماعت 25اکتوبر تک ملتوی گواہوں پر دباؤ ڈالا جا رہا ہے وکیل کا الزام معاملہ جلد ہائی کورٹ میں لے کر جائیں گیں۔

وکیل استغاثہ فضل خان ایڈوکیٹ کی میڈیا سے گفتگوتین سرکاری گواہوں سمیت 37گواہوں کے بیانات اب تک قلمبندہو چکے ہیں مشال خان قتل کیس کی آٹھویں سماعت گزشتہ روز سنترل جیل میں قائم دہشت گردی کی خصوصی کورٹ روم میں ہوئی جہاں ایبٹ آباد دہشت گردی کی عدالت کے جج فضل سبحان خان نے سماعت کی مزیدمردان یونیورسٹی کے ایک ملازم جوکہ سرکاری گواہ کا بیان کا ریکارڈ کیا گیا ہے۔

نویں سماعت تک مجموعی طور پر گواہوں کے تعداد37ہو گئی ہے جوکہ اپنا بیان ریکارڈ کرا چکے ہیں ادھر وکیل استغاثہ فضل خان ایڈوکیٹ نے میڈیا سے گفتگو کے دوران الزام عائد کیا ہے کہ قتل کیس کا مرکزی گواہ پنے ہی بیان سے منحرف ہو گیا جس وجہ سے جرح نامکمل ہو ئی ہے گواہوں پر دباؤ ڈالا جا رہاہے جوکہ زیادتی ہے تمام معاملہ پشاور ہائی کورٹ میں لے کر جائیں گیں وکیل استغاثہ فضل خان ایڈوکیٹ نے الزام عائد کیا کہ اپنے ساتھ ہونے والی زیادتی برادشت نہیں کریں گیں۔

عدالتوں سے انصاف کی توقع ہے سنٹرل جیل میں قائم دہشت گردی کی خصوصی عدالت میں پچیس گرفتار ملزما ن کی درخواست ضمانتوں پر فیصلہ بیس اکتوبر تک محفوظ کیا گیا ہے واضح رہے کہ انیس ستمبر کو ہونے والی سماعت کے دوران گرفتار ستاون ملزمان پر فرد جرم عائد کی گئی تھی مثال خان قتل کیس میں ایف آئی آ رمیں نامزد چا ر ملزمان تاحال مفرور ہیں دوران سماعت جیل کے اندر بھی سیکورٹی کو سخت کر دیا گیا ہے۔

جیل اہلکاروں کی اضافی نفری کو جیل ٹرائل کور ٹ روم کے پاس تعینات کیا جاتا ہے سما عت کے دوران مشال خان کے والد اقبال لالہ ان کے ہمراہ دو سرکاری وکیل بھی ہر سماعت پر باقائدگی سے پیش ہو رہے ہیں مشال خان قتل کیس کی سنٹرل جیل میں سماعت کے دوران قیدیوں کی ملاقات پر پابندی بھی عائد ہے پولیس سمیت دیگر سیکورٹی فورسز کی بھاری نفری کو بھی سماعت ختم ہونے تک الرٹ رکھا جاتا ہے جیل کی طرف آنے والے داخلی وخارجی راستوں کو رکاوٹیں کھڑی کرکے مکمل بند ہے واضح رہے کہ عبدا لولی خان مردان یونیورسٹی میں شعبہ صحافت کے طالب علم مشال خان کو توہین مذہب کے الزام پر قتل کر دیا گیاتھا ۔