بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبر پختونخوا اسمبلی کی قانون سازی دوسروں کیلئے مثال ہے ٗ اسد قیصر

خیبر پختونخوا اسمبلی کی قانون سازی دوسروں کیلئے مثال ہے ٗ اسد قیصر


پشاور ۔ سپیکر خیبر پختونخوا اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا اسمبلی تقریباً153قوانین پاس کرکے ایک مثالی اسمبلی بن گئی ہے ۔پاکستان تحریک انصاف کی حکومت اپنی تمام تر توجہ نوجوانوں کو میرٹ پر ملازمتیں فراہم کرنے ،کرپشن سے پاک معاشرے کے قیام ،انصاف کی فراہمی اور گڈگورننس کے قیام سمیت معیاری تعلیم اور صحت کی بہتر سہولتوں کی فراہمی پر مرکوز کئے ہوئے ہے۔

انہوں نے ان خیالات کا اظہار برٹش کونسل کے ہیڈ آف ریجنل اینڈپراسپیرٹی ٹیم انتھونی سٹینلے سے صوبائی اسمبلی سیکرٹریٹ میں بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔سپیکر نے کہا کہ خیبرپختونخوا اسمبلی سب سے زیادہ قانون سازی کرنے کے باعث تمام صوبوں کیلئے ایک مثالی اسمبلی بن چکی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی اسمبلی نے احتساب کمیشن بل ،وسل بلورزبل ،رائیٹ ٹوانفارمیشن بل ،کانفلکٹ آف انٹرسٹ بل سمیت 153قوانین پاس کئے ۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ اسمبلی میں پڑھے لکھے نوجوان ممبران اسمبلی کی اکثریت ہے اور چونکہ 90فیصدممبران پہلی مرتبہ منتخب ہوکر آئے ہیں لہٰذا ضرورت اس امر کی تھی کہ ان ممبران اسمبلی کو اسمبلی قواعد وضوابط اور قانون سازی کے مراحل سے آگاہی کیلئے مناسب ٹریننگ دی جائے ۔ چنانچہ اس مقصد کیلئے بحیثیت اسمبلی کے کسٹوڈین کے انہوں نے ممبران اسمبلی کیلئے پشاور میں مختلف ٹریننگ پروگراموں کا انعقاد کیا ۔

انہوں نے کہا کہ صرف اسی پر اکٹھا نہیں کیا گیا بلکہ برٹش کونسل کے تعاون سے ممبران اسمبلی کو قانون سازی سے بہتر آگاہی کیلئے اسکاٹ لینڈ اور آئل آف مین کی اسمبلیوں کے دورے بھی کر وائے گئے ۔جہاں پر ممبران اسمبلی نے ان اسمبلیوں میں قانون سازی کے مختلف مراحل سمیت وہاں کی گڈ گورننس ،لوکل گورنمنٹ نظام اور پولیس نظام کا بغورمشاہدہ کرکے بہتر تجربہ حاصل کیا ۔

سپیکر نے کہا کہ بیرون ممالک کے دوروں سے واپس لوٹ کرآنے والے ممبران اسمبلی نے خیبر پختونخوا میں قانون سازی کے دوران بہترین کارکردگی دکھائی جس کے مثبت اثرات مرتب ہوئے برٹش کونسل کے نمائندہ نے کہا کہ مذکورہ کونسل خیبر پختونخوا صوبہ میں کئی شعبوں میں تعاؤن کر رہی ہے اور مستقبل میں اس کا دائرہ مزید بڑھانے کی خواہش مند ہے انہوں نے کہا برطانیہ کے عوام پاکستانی عوام کے لئے خیر سگالی کا جذبہ رکھتے ہیں۔