بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / بھارت میں قید پاکستانی شہری 12 سال بعد رہا

بھارت میں قید پاکستانی شہری 12 سال بعد رہا


بھارت میں قید پاکستانی شہری کو 12 سال بعد رہا کر دیا گیا۔پچاس سالہ خالد پرویز کو بھارتی حکام نے واہگہ بارڈر پر پاکستانی حکام کے حوالے کیا جہاں سے وہ اپنے آبائی علاقے نارووال کے لیے روانہ ہو گئے۔

پاکستانی سرحد میں داخل ہوتے ہی خالد پرویز نے سجدہ شکر ادا کیا اور رہائی کے لیے پاکستانی ہائی کمیشن کی کوششوں کو سراہا۔خالد محمود 2005 میں کرکٹ میچ دیکھنے بھارت گئے تھے جہاں 2006 میں انہیں گرداسپور سےگرفتار کرلیا گیا اور غیرقانونی قیام کےالزام میں جیل بھیج دیا گیا تھا۔

رواں ماہ 2 نومبر کو بھی بھارتی حکومت نے دو پاکستانی بہنوں کو 11 برس بعد رہا کیا تھا۔ دونوں میں سے ایک بہن نے بھارت میں اسیری کے دوران ہی ایک بچی کو جنم دیا تھا، وہ بچی بھی اپنی والدہ اور خالہ کے ہمراہ پاکستان آئی تھی۔

خیال رہے کہ دونوں بہنیں اپنی والدہ کے ہمراہ 2006 میں سمجھوتہ ایکسپریس کے ذریعے بھارت گئیں تھیں جہاں ان پر منشیات کی اسمگلنگ کا الزام عائد کر کے انہیں قید کر دیا گیا تھا۔