بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / وزیر خزانہ اسحاق ڈار کا عہدے سے مستعفی ہونے کا فیصلہ

وزیر خزانہ اسحاق ڈار کا عہدے سے مستعفی ہونے کا فیصلہ


اسلام آباد۔وزیر اعظم کے ترجمان مصدق ملک نے اسحاق ڈار کے مستعفی ہونے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیرخزانہ اسحاق ڈار کی علالت کے بعد وزارت خزانہ کا قلمدان وزیراعظم کے پاس ہے اور خزانہ سے متعلق تمام امو پر بریفنگ لے رہے ہیں ،عدالتی احکامات کی صورت میں ڈار کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا جائزہ لیا جائیگا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نیب کی جانب سے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش کے پیش نظر خزانہ کے عہدے سے مستعفی ہونے کا فیصلہ کرلیا ہے لیکن اسحاق ڈار کا استعفیٰ منظور کرنے کا فیصلہ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سابق وزیر اعظم نواز شریف سے مشاورت کے بعد کریں گے ۔

رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کچھ روز قبل اپوزیشن کے دباؤ کے پیش نظر سابق وزیر اعظم نواز شریف سے ایک ملاقات میں اسحاق ڈار کے مستعفی ہونے کی بات کی تھی تو نواز شریف نے شاہد خاقان عباسی کو صاف انکار کر دیا تھا اور کہا کہ اسحاق ڈار ہی ملک کے وزیر خزانہ رہیں گے لیکن جب نیب نے دوبارہ سے ان کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش کی ہے تو اس کے بعد حکومت اور وزیر اعظم پر مزید دباؤ بڑھ گیا تاکہ کوئی مستقل طور پر وزیر خزانہ بنایا جائے اور مزید بدنامی سے خود کو بچایا جائے ۔ تمام پہلوؤں کو مدنظر رکھنے کے بعد اسحاق ڈار نے وزارت خزانہ سے استعفیٰ تو دے دیا لیکن ان کے استعفے کی منظوری حوالے سے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نواز شریف سے مشاورت کے بعد فیصلہ کریں گے اور اس وقت تک وزارت خزانہ کا قلمبدان وزیر اعظم کے پاس ہی موجود رہے گا لیکن ملکی خزانہ اور اقتصادیات کے معاملات چلانے کے لئے ایک ایکسپرٹس ٹیم رکھی جائے گی جن میں گورنر اسٹیٹ بنک ڈاکٹر عشرت حسین سمیت دیگر ایکسپرٹس ماہرین شامل ہوں گے جو کہ ملک کے وزارت خزانہ کے حوالے سے تمام امور کو چلائیں گے ۔

دوسری جانب وزیر اعظم کے ترجمان مصدق ملک نے مستعفی ہونے سے متعلق خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ عدالتی احکامات کے بعد اسحاق ڈار کا نام ای سی ایل میں ڈالے جانے کا جائزہ لیا جائیگا، اسحاق ڈار کی علالت کے بعد وزیر خزانہ کا قلمدان وزیر اعظم کے پاس موجود ہے اور وہ تمام کام احسن طریقے سے نبھا رہے ہیں اور اس سلسلے میں روزانہ کی بنیاد پر وزارت خزانہ کے حکام سے بریفنگ لے رہے ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ وزرا پرالزامات لگتے ہیں،ایسے توساری کابینہ کا نام ای سی ایل میں آ جائے گا۔میڈیا رپورٹس میں دعوی کیا گیا ہے کہ اسحاق ڈار نے عہدے سے مستعفی کا فیصلہ نہیں کیا ہے ان کے پاس بہت سے آئینی راستے موجود ہیں اس لئے ابھی تک اسحاق ڈار بدستور وزیر خزانہ قائم ہیں ۔